چینی صدر کا دورہ پاکستان، دفاتر اور تعلیمی اداروں میں چھٹی کرنے پر غور

اسلام آباد (آن لائن) چینی صدر کے دورہ پاکستان کے موقع پر حکومت سرکاری دفاتر اور تعلیمی اداروں میں چھٹی کرنے پر غور کر رہی ہے۔ سکیورٹی کی صورت حال اور شہریوں کی آمد و رفت کی مشکلات سے بچنے کے لئے فیصلہ کیا جا رہا ہے چینی صدر کے حوالے سے حتمی تاریخ کا اعلان سکیورٹی خدشات کی وجہ سے نہیں کیا جا رہا ہے حکومتی ذرائع کے مطابق وفاقی حکومت چینی صدر کے دورہ پاکستان کے موقع پر عام تعطیل کرنے پر غور کر رہی ہے۔ چینی صدر کا دورہ پاکستان جو 17 اپریل سے 22 اپریل کے درمیان متوقع ہے کے موقع پر سرکاری ملازمین کے لئے عام تعطیل جبکہ تعلیمی ادارے بھی بند رہیں گے اور مقررہ تاریخ کو ہونے والے پرچے امتحان کے آخری روز دوبارہ لئے جانے کا امکان ہے۔ ذرائع کے مطابق یہ فیصلہ چینی صدر کے دورہ پاکستان کے موقع پر سکیورٹی کے سخت ترین انتظامات کی وجہ سے کیا جا رہا ہے تاکہ شہری اور طلباء کو پریشانیوں سے بچایا جا سکے۔ چینی صدر کے دورے کے موقع پر سکیورٹی کے تمام انتظامات پاک فوج سنبھالے گی جبکہ دیگر حساس اداروں کے اہلکار پہلے ہی سکیورٹی پر مامور کئے جا چکے ہیں۔ چینی صدر لی کی کبانگ پاکستان میں جتنا بھی وقت گزاریں گے اس دوران ان کی رہائش کے لئے مختص فائیو سٹار ہوٹل کی انتظامیہ نے بھی اپنے مسافروں کی لسٹ ری شیڈول کر دی ہیں۔