اقوام متحدہ کی جانب سے سعودی فوجی اتحاد کو بلیک لسٹ کرنے کیخلاف اسلام آباد میں مظاہرہ

اسلام آباد( وائع نگار خصوصی) ڈاکٹروں، سول سوسائٹی سے وابستہ افراد اور یمنی باشندوںنے اقوام متحدہ کی جانب سے سعودی فوجی اتحاد کو بلیک لسٹ کرنے کیخلاف اسلام آباد میں احتجاجی مظاہرہ کیا اور اقوام متحدہ کی یمن میں بچوں کی ہلاکت سے متعلق رپورٹ کو گمراہ کن قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ یہ حقائق کے بالکل برعکس ہے۔ اقوام متحدہ ایک طرح حوثی باغیوں سے ہتھیار گرانے کا مطالبہ کرتی ہے اور دوسری جانب بے بنیاد رپورٹوں کے ذریعہ حوثیوں کو شہ دیکر سرزمین حرمین شریفین کیلئے خطرات کھڑے کئے جارہے ہیں۔ نیشنل پریس کلب کے باہر مظاہرہ میں ڈاکٹرز، سول سوسائٹی کے نمائندوں اور پاکستان میں رہائش پذیر یمنی شہریوں نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔ اس دوران سعودی فوجی اتحاد کو بلیک لسٹ کرنے کیخلاف شدید نعرے بازی کی گئی۔ احتجاجی مظاہرہ سے ڈاکٹرز کی تنظیم پی ایم ڈی سی کے رہنما ڈاکٹر مجاہد گیلانی،پاکستان میں قیام پذیر یمنی کمیونٹی کے رہنما عبدالرحمن الصالحی اور سول سوسائٹی کے رہنما راجہ ظفر اقبال و دیگر نے خطاب کیا۔ مظاہرین نے اقوام متحدہ کے پاکستان میں مندوب سے مطالبہ کیا کہ وہ اپنی رپورٹ میں ترمیم کریں اور حقائق کے حصول سے متعلق یکطرفہ ذرائع پر اعتبار نہ کریں۔ ڈاکٹروں کی نمائندہ تنظیم پی ایم ڈی سی کے رہنما ڈاکٹر مجاہدگیلانی نے احتجاجی مظاہرہ سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ اقوام متحدہ کی قرارداد حقائق کے منافی ہے۔ اس سے یمن میں دہشت گرد حوثی باغیوں کو شہ ملے گی اور ارض مقدس سرزمین حرمین شریفین کیلئے خطرات بڑھیں گے۔اقوام متحدہ کو چاہیے کہ وہ حالات کو ایک ہی رخ سے نہ دیکھے ‘ یمن میں بغاوت سے پیدا ہونےو الے حالات کو کھلی آنکھوں سے سامنے رکھنا چاہیے۔