کنٹونمنٹ بورڈ راولپنڈی میں پانی کے بلوں پر جعلی مہریں لگا کر رقم ہڑپ کرنے والا گروہ گرفتار

راولپنڈی (محمد رضوان ملک / نیوزرپورٹر) کنٹونمنٹ بورڈ راولپنڈی میں پانی کے بلوں پر جعلی مہریں لگا کر رقم ہڑپ کرنے والا گروہ پکڑا گیا۔ ذرائع کے مطابق کنٹونمنٹ بورڈ راولپنڈی کی واٹر ریکوری برانچ کے تین کلرک محسن ، تنویر اور فرحان جعلی مہروں اور افسران کے جعلی دستخطوں کے ذریعے پانی کے بلوں کی رقم صارفین سے لے کر سرکاری خزانے میں جمع کرانے کی بجائے اپنی جیبوں میں ڈال رہے تھے۔ ایگزیکٹو آفیسر کنٹونمنٹ بورڈ راولپنڈی ڈاکٹر صائمہ شاہ نے جمعہ کو کاروائی کرتے ہوئے تینوں کو رنگے ہاتھوں پکڑ لیا ۔ ”نوائے وقت “کے رابطہ کرنے پر انہوںنے بتایا کہ مذکورہ ملازمین کو ان کے عہدوں سے معطل کر دیا گیا ہے اور ان کے خلاف انکوائری کی جائے گی اور ذمہ داران کو سخت سزا دی جائے گی۔ انہوںنے بتایا کہ اس قسم کے فراڈ سے بچنے کے لئے بورڈ نے الیکٹرک کمپیوٹرائز بل متعارف کرائے ہیں ۔انہوںنے کہا کہ نقصانات کا اندازہ لگایا جارہا ہے اور فراڈیوں کو ان کے عہدوں سے الگ کر دیا گیا ہے ۔ ذمہ داران کے خلا ف سخت ایکشن لیا جائے گا۔ یاد رہے کہ کچھ روز قبل کنٹونمنٹ بورڈ کے بلڈنگ ڈیپارنمنٹ کے عملہ کے خلاف بھی کاروائی کی گئی تھی جن کی ملی بھگت سے شہر میں غیر قانونی عمارات کی تعمیر کی جارہی تھی۔