ممبئی حملے: پاکستان نے بھارتی تحریری متن کا بھرپور جواب تیار کر لیا

اسلام آباد (سہیل عبدالناصر) بھارت نے ممبئی حملوں کے حوالے سے پاکستان کو جو مواد اور تحریری متن بھیجا تھا اس کا جامع اور مسکت جواب تیار کیا جا رہا ہے۔ نوائے وقت کو معتبر ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ اس سلسلہ میں سرگرمیوں کا مرکز دفتر خارجہ ہے جہاں رات گئے تک وزارت خارجہ‘ وزارت داخلہ‘ متعلقہ سکیورٹی اور انٹیلی جنس اداروں کے حکام حکمت عملی ترتیب دیتے ہیں۔ ذرائع کے مطابق پاکستان کو جواب ارسال کرنے میں قطعاً کوئی عجلت نہیں کیونکہ پاکستان کا جواب صرف ممبئی کے حوالے سے نہیں ہو گا بلکہ اس کے متن میں ان تمام اسباب‘ عوامل اور بھارتی حکومت کے رویہ کا جائزہ بھی لیا جا رہا ہے جو پورے خطہ میں دہشت گردی کا باعث بنا ہوا ہے‘ پاکستان کی جانب سے اجمل قصاب اور ممبئی واقعات کی جس طرح تشریح بھارت نے کی ہے اس کے بارے میں وضاحتیں مانگی جائیں گی۔ یہ جواب بھارت کے علاوہ تمام دوست ممالک کو سفارتی ذرائع سے بھیجا جائے گا تاکہ ممبئی کے واقعات کے حوالے سے بھارت نے جو یکطرفہ پراپیگنڈا کیا ہے اس کا پردہ چاک کر کے ان واقعات کے وہ پہلو دنیا کے سامنے لائے جائیں جن کو بھارت اجاگر کرنے سے گریزاں ہے۔ ایک اور ذریعہ کے مطابق پاکستان کے جواب میں بھارتی دہشت گرد سربجیت سنگھ کا بھی حوالہ دیا جائے گا جسے پاکستانی سرزمین پر تخریب کاری کے ثابت شدہ الزامات کے تحت عدالتوں نے سزائیں سنائی ہیں۔ اس نوعیت کے ایک مجرم کشمیر سنگھ کو رہا کر کے بھارت کے حوالے کیا جا چکا ہے۔ ان دہشت گردوں کی بھارت کی قومیت کے باوجود پاکستان نے بھارت کے ساتھ اشتعال انگیز رویہ اختیار نہیں کیا نہ ہی حالات مزید خراب کرنے کی کوشش کی۔