امریکہ کلیئرنس لینے نہیں گیا تھا: جسٹس افتخار‘ 60ویں سالگرہ منائی

امریکہ  کلیئرنس  لینے  نہیں  گیا  تھا:  جسٹس  افتخار‘  60ویں  سالگرہ  منائی

اسلام آباد (ثناء نیوز + نیٹ نیوز) غیر فعال چیف جسٹس افتخار محمد چودھری نے کہا ہے کہ وہ امریکہ کلیئرنس لینے کے لئے نہیں بلکہ ہاورڈ لاء کالج کی اعزازی ڈگری اور نیویارک بار کی رکنیت کے لئے گئے تھے اور ان کے دورہ امریکہ کے دوران کسی سرکاری شخصیت سے ملاقات نہیں ہوئی‘ یہ سرکاری دورہ نہیں تھا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ روز اپنی 60ویں سالگرہ کے موقع پر نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ جسٹس افتخار نے کہا کہ ان کی بحالی کی تحریک کا دارومدار وکلاء اور عوام کی جدوجہد پر ہے‘ اگر یہ جذبہ برقرار رہا تو وہ ضرور بحال ہوں گے۔ قبل ازیں جسٹس افتخار کی ساٹھویں سالگرہ ان کی رہائش گاہ پر منائی گئی‘ اس مختصر سی تقریب میں ہائیکورٹ بار راولپنڈی کے صدر سردار عصمت‘ اسلام آباد ہائیکورٹ کے صدر ہارون الرشید سمیت د یگر وکلاء اور سول سوسائٹی کے ارکان نے شرکت کی‘ جسٹس افتخار نے سالگرہ کا کیک کاٹا۔