وزیراعظم نے بیرون ملک تعینات تمام ٹریڈ افسروں کو واپس بلانے، نئی تعیناتیو ںکی منظوری دیدی

وزیراعظم نے بیرون ملک تعینات تمام ٹریڈ افسروں کو واپس بلانے، نئی تعیناتیو ںکی منظوری دیدی

اسلام آباد( آن لائن )وفاقی حکومت نے بیرون ملک تعینات تمام پاکستانی ٹریڈافسرا ن کو ملک واپس بلانے اور ان کی جگہ نئے افسران تعینات کرنے کی منظوری دیدی ہے،نئے افسران کی تعیناتی کا عمل رواں سال کے آخر تک مکمل کرلیا جائیگاجبکہ ٹریڈ افسران کی ملک واپسی کا عمل اپریل سے شروع ہونے کاامکان ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ بیرون ملک تعینات موجودہ ٹریڈ افسران کی دو سالہ تعیناتی کا عمل پیپلز پارٹی دور حکومت کے آخری ایام مارچ 2013میں شروع کیاگیا تھا ، ان تمام 55ٹریڈ افسران کی ملک واپسی اور ان کی جگہ پر نئے افسران کی تعیناتی کیلئے وزارت تجارت نے وزیر اعظم کو منظوری کیلئے سمری بھجوائی دی تھی جس کی منظوری کیلئے دیدی گئی ہے۔ذرائع نے بتایا کہ نئے ٹریڈ افسران کی تعیناتی دو سال کے عرصہ کیلئے کی جائیگی اور ان کا تحریر ی امتحان لاہوریونیورسٹی آف مینجمنٹ سائسنسز( لمز) لے گا،تحریری امتحان کیلئے 80فیصد اورباقی ماندہ20فیصد نمبر انٹرویوز اور امیدواروں کی کارکردگی سے متعلق رکھے گئے ہیں ،ٹریڈ افسران کی تعیناتی تمام گروپس کیلئے اوپن ہوگی۔ذرائع نے بتایا کہ نئے ٹریڈ افسران کا تقرر کرنے کیلئے کم از کم 6سے 8ماہ کا عرصہ درکار ہو گا اورامیدواروں سے انٹرویو لینے کا پینل بعد ا زاں وزیر اعظم کی منظوری سے بنے گا۔نئے ٹریڈافسران کو بیرون ملک پاکستانی سفارتخانوں میں ٹریڈ منسٹر ،کونسل جنرل ،کمرشل قونصلر اور کمرشل سیکرٹری کے عہدیوں پر تعینات کیا جائیگا۔