ملکی ترقی کیلئے کرپشن کا خاتمہ ضروری، کرپٹ عناصر کی حوصلہ شکنی کی جائے: صدر

ملکی ترقی کیلئے کرپشن کا خاتمہ ضروری، کرپٹ عناصر کی حوصلہ شکنی کی جائے: صدر

اسلام آباد(اآن لائن)کرپشن کے خاتمہ کیلئے قومی احتساب بیورو کے زیر اہتمام گزشتہ روز ایوان صدر اسلام آباد میں واک کا اہتمام کیا گیا جس میں صدر ممنون حسین نے شرکت کی۔ "Say No to Corruption" کے عنوان سے منعقدہ اس واک میںآزاد جموں و کشمیر کے صدر سردار یعقوب خان ‘ ہائیرایجوکیشن کمیشن کے چیئرمین ڈاکٹر مختار احمد‘ ایوان صدر ‘نیب کے اعلیٰ افسروں، غیر ملکی سفیروں، سکول کے بچوں، سکائوٹس اور اساتذہ ‘ ہاکی اور کرکٹ کے کھلاڑی ‘ اسلام آباد پولیس اور موٹر وے پولیس کے آئی جیز اور اعلیٰ افسروں‘ او جی ڈی سی ایل ‘ پی آئی اے اور سول سوسائٹی کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ واک کے شرکاء نے بینرز اور پوسٹر اٹھا رکھے تھے جن پر نیب کا پیغام کرپشن سے انکار اور کرپشن کے خاتمے کیلئے دیگر نعرے درج تھے۔ ریلی کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے صدر نے کہا کہ قومی احتساب بیورو کی طرف سے منعقدہ انسداد بدعنوانی واک میں نوجوانوں، بزرگوں اور بچوں کی بڑی تعداد کی شرکت اس بات کو ظاہر کررہی ہے کہ پاکستانی قوم کے اندر کرپشن کے خلاف جدوجہد کا جذبہ موجود ہے۔ انہوں نے کہا کہ کرپشن نے ہمارے ملک کو دیمک کی طرح چاٹ لیا ہے۔ ملک کی ترقی کیلئے ضروری ہے کہ کرپشن کو جڑ سے اکھاڑ پھینکا جائے اور کرپٹ عناصر کی ہر سطح پر حوصلہ شکنی کی جائے۔ قومی احتساب بیورو کے چیئرمین قمر الزمان نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ایوان صدر میں قومی احتساب بیورو کے زیر اہتمام منعقدہ واک ملک میں کرپشن کے خاتمے اور عوام میں اس کیخلاف شعور اجاگر کرنے میں انتہائی مدد گار ثابت ہوگی۔ دریں اثنا صدر نے کہا ہے کہ حضرت شاہ رکن عالمؒ نے حقیقی فلاحی ریاست کا تصور پیش کیا اور اسلامی تعلیمات عام کیں۔ صوفیاء نے تنگ دستی کے دور میں انسانیت کی خدمت کی۔ بزرگوں کے نقش قدم پر چل کے ملک سے خونریزی کا خاتمہ کیا جا سکتا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے وزارت مذہبی امور اور پرسٹن یونیورسٹی کے زیر اہتمام شاہ رکن عالم کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔