قومی اسمبلی میں توہین عدالت کے قانون میں ترمیم کے بل پاس کرانے کے خلاف جڑواں شہروں کے وکلاء کا عدالتی بائیکاٹ ۔

اسلام آباد ہائی کورٹ، ڈسٹرکٹ کورٹ،لاہور ہائی کورٹ راولپنڈی بینچ اور راولپنڈی ڈسٹرکٹ کورٹس میں وکلاء قومی اسمبلی سے توہین عدالت کا ترمیمی بل پاس کرانے کے خلاف ہڑتال کر رہے ہیں وکلاء کی طرف سے اس اقدام کے خلاف آج یوم سیاہ منایا جا رہا ہےاورعدالتی کاروائیوں کا بائیکاٹ بھی جاری ہے۔وکلاء کی ہڑتال کے باعث مقدمات کی عدالتوں میں آنے والے سائلین کو مشکلات کا سامنا ہے۔اسلام آباد ہائی کورٹ بار کے صدر سید نایاب حسین گردیزی نے وقت نیوز سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ حکمرانوں نے اپنے خلاف سپریم کورٹ کے فیصلوں پر عمل درآمد کی بجائے کھلی جنگ کا آغاز کر دیا ہے اور خود کو بچانے کے لیے توہین عدالت کے قانون میں ترمیم کی جا رہی ہے۔ان کا کہنا تھا اگرحکمران ایسے ہتھکنڈوں سے باز نہ آئے تو وکلاء برادری عدلیہ بحالی کی طرح ایک بار پھر سڑکوں پر ہو گی۔