آزاد کشمیر حکومت کا ہر شعبہ کرپشن میں ڈوبا ہوا ہے: برجیس طاہر

آزاد کشمیر حکومت کا ہر شعبہ کرپشن میں ڈوبا ہوا ہے: برجیس طاہر

اسلام آباد (اے پی اے + ثناء نیوز) وفاقی وزیر برائے اُمور کشمیر و گلگت بلتستان برجیس طاہر نے کہا ہے کشمیر کا ہر شعبہ کرپشن میں ڈوبا ہوا ہے۔ آزاد کشمیر حکومت نوکریاں ریوڑیوں کی طرح بانٹ رہی ہے۔ وفاقی حکومت آزاد کشمیر میں کسی سیاسی سازش کا حصہ نہیں بننا چاہتی لیکن آزاد کشمیر اسمبلی میں تحریک عدم اعتماد اپوزیشن کا آئینی حق ہے، آزاد کشمیر میں کرپشن پر وزیرا عظم پاکستان میاں محمد نوازشریف کو تشویش ہے۔ مسلم لیگ (ن) آزاد کشمیر کے وفد جس کی قیادت راجہ فاروق حیدر صدر مسلم لیگ (ن) آزاد کشمیر کر رہے تھے، چودھری برجیس طاہر سے ان کے دفتر میں ملاقات کی۔ وفد کے دیگر ارکان میں افتخارگیلانی ایم ایل اے اور طارق فاروق سینئر نائب صدر مسلم لیگ (ن) آزاد کشمیر شامل تھے۔ راجہ فاروق حیدر نے وفاقی وزیر برائے اُمور کشمیر و گلگت بلتستان سے کہا کہ مسلم لیگ (ن) نے آتے ساتھ ہی ملک میں کرپشن میں نمایاں کمی کی اور عالمی سطح پر پاکستان کی کرپشن میں رینگنگ بہتر ہوئی لیکن افسوس کا مقام یہ ہے کہ آزاد کشمیر محروم ہے۔ وزیروں اور مشیروں کی ایک فوج ظفر موج عوامی پیسے سے پل رہی ہے۔ وفاقی حکومت اپنا کردار ادا کرتے ہوئے عبدالمجید حکومت کی شاہ خرچیوں کو لگام دے۔ چودھری محمد برجیس طاہر نے کہا کہ آزاد کشمیر کی حکومت کو کئی بار اس سلسلے میں آگاہ کیا گیا ہے لیکن آج تک اس میں بہتری نہیں آ رہی۔ انہوں نے کہا کہ آئین پاکستان کی رو سے انتظامی اکائیوں میں گوڈ گورننس کا قیام وفاقی حکومت کی ذمہ داری ہے۔ ایرا 44 ارب روپے کا حساب دے۔ گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے تحقیقات کے لئے ہدایات جاری کیں۔