پاکستان، افغانستان تجارتی معاہدہ موجودہ شکل میں منظور نہیں: اسلام آباد چیمبر کا پیٹرسن کو جواب

اسلام آباد (قسورکلاسرا / نیشن رپورٹ) امریکی سفیر ڈبلیو پیٹرسن اسوقت مشکل میں پڑ گئیں جب اسلام آباد چیمبر آف کامرس کے ممبران نے ان سے پاکستان، افغانستان ٹرانزٹ ٹریڈ معاہدے کے بارے میں تلخ سوالات کئے۔ امریکی سفیر تاجروں سے خطاب کرنے آئیں تھیں۔ باخبرذرائع نے دی نیشن و نام ظاہر نہ کرنیکی شرط پر بتایا کہ تاجروں نے امریکی سفیر پر واضح کردیا کہ پاکستان افغانستان تجارتی معاہدہ موجودہ شکل میں ہمیں قابل قبول نہیں ہے کیونکہ معاہدے نے پاکستانی ٹرک ڈرائیورز کا مستقبل داﺅ پر لگا دیا ہے، تاہم اگر پاکستانی گڈز ٹرانسپورٹرز کو واہگہ سے طورخم تک اشیاءلیجانے کی اجازت دی جائے تو پھر اسکو کچھ حد تک قبول کیا جاسکتا ہے تاجروں نے سفیر سے کہا کہ بتایا جائے کہ امریکہ نے معاہدے پر دستخط کرنے کیلئے پاکستان پر کیا دباﺅ ڈالا ہے جس نے ملکی سکیورٹی پر کئی سوالات اٹھائے ہیں جبکہ اس سے پاکستان میں ہزاروں ٹرانسپورٹ گڈز ٹرانسپورٹر کے روزگار کو بھی خطرے میں ڈال دیا ہے۔