جماعۃ الدعوۃ کا کارواں، حرمین شریفین کیلئے اپنی جانیں قربان کرنے کو تیار ہیں: حافظ سعید

اسلام آباد(آن لائن)جماعۃ الدعوۃ کے زیر اہتمام تحفظ حرمین شریفین کاررواں اور جلسہ عام سے مذہبی وسیاسی جماعتوں کے قائدین اور جید علماء کرام نے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ سعودی عرب کا دفاع حرمین شریفین کا دفاع ہے،پاکستان کا بچہ بچہ حرمین کے تحفظ کیلئے اپنی جانیں نچھاور کرنے کیلئے تیار ہے۔ تحفظ حرمین شریفین کارواں، جلسوں و کانفرنسوں کا سلسلہ جاری رکھا جائے گا، حوثی باغیوں کے مکہ اور مدینہ کی طرف بڑھے والے ناپاک قدم روکنا ہوں گے۔ جماعۃ الدعوۃ کے سربراہ پروفیسر حافظ محمد سعید نے کہاکہ عوام حرمین شریفین کے لئے اپنی جانیںقربان کرنے کے لئے تیار ہیں۔یہ سیاسی مسئلہ نہیں ہے جہاں حرمین کے تحفظ کی بات آجائے وہاں سیاست نہیں ہوتی۔اس مسئلہ پر فرقہ واریت کا رنگ نہیں چڑھنے دیں گے۔اس وقت ملک میں سعودی عرب مخالف لابیاں کام کر رہی ہیں۔حرمین کے دفاع سے بڑا کوئی مسئلہ نہیں ہے۔ہم سارے پاکستان میں زبردست اتحاد کی قوت کھڑی کریں گے۔حرمین اور سعودی عرب کا دفاع ایک ہے۔ کوئی کسی غلط فہمی میں نہ رہے۔ ہمیں یقین ہے کہ سب پارلیمنٹ ممبران کے دلوں میں حرمین شریفین کی محبت ہے۔ان شاء اللہ وہ صحیح فیصلہ کریں گے لیکن اگر کسی سازش کاشکار ہو کر غلط فیصلہ کیاگیا توعوام شہر شہر جا کر ہر ممبر کا محاسبہ کریں گے۔ مسلم ملکوں میں بغاوتوں کو ہوا دی جا رہی ہے۔پاکستان،افغانستان میں یہی کھیل کھیلا گیا اور انہیں میدان جنگ بنایا گیا۔ بیرونی قوتوں کا نشانہ سعودی عرب ہے اور یمن کو استعمال کیا جا رہا ہے۔ اہلسنّت والجماعت پاکستان کے سربراہ علامہ محمد احمد لدھیانوی نے کہا کہ سیاستدانوں نے پارلیمنٹ کو یمن کا میدان بنایا ہوا ہے۔ ہم حرمین کے تحفظ کے لئے اپنی اولادوں کو لے کر میدان میں نکلیں گے۔ پروفیسر حافظ عبدالرحمن مکی نے کہا کہ مسلمان حرمین شریفین کی طرف بڑھنے والے ہاتھ توڑ ڈالیں گے اور دفاع کے لئے اپنی جانیں قربان کرنے کے لیے تیار ہیں۔ مولانا فضل الرحمان خلیل نے کہا کہ یہ یمن کا اندرونی مسئلہ نہیں بلکہ عالم اسلام اور حرمین کے تحفظ کا مسئلہ ہے۔ علامہ زبیر احمد ظہیر نے کہا کہ یمن کے باغیوں نے سرزمین حرمین شریفین کو ٹارگٹ بنایا ہے اب ہر مسلمان کی غیرت جاگ جانی چاہئے۔ حافظ عبدالغفار روپڑی نے کہا کہ حوثی باغیوں کے مکہ و مدینہ کی طرف بڑھتے قدموں کو روکنا ہوگا۔ رکن قومی اسمبلی جمشید دستی نے کہا کہ امریکہ و اسرائیل سعودی عرب کے خلاف ناپاک عزائم رکھتے ہیں۔ امریکہ و اسرائیل کے خلاف اور تحفظ حرمین کیلئے ہر مسلمان اپنے خون کا آخری قطرہ تک بہانے کے لئے تیار ہے۔ مولانا امیر حمزہ نے کہاکہ ہم حرمین کے تحفظ کے لئے جانیں قربان کرنے کا عزم رکھتے ہیں۔ کارواں میں لوگوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ بعد ازاں پریس کلب کے سامنے گرائونڈ میں ایک بڑے جلسہ عام کا انعقاد کیا گیا۔