داسو، بھاشا ڈیم مکمل ہونے، کوئلے سے بجلی بننے پر تھرمل پر انحصار ختم کردینگے: اسحاق ڈار

داسو، بھاشا ڈیم مکمل ہونے، کوئلے سے بجلی بننے پر تھرمل پر انحصار ختم کردینگے: اسحاق ڈار

اسلام آباد(آن لائن + ثناء نیوز)وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے کہا ہے کہ حکومت کی توجہ سستی بجلی پیدا کرنے پر مرکوز ہے، دیامیر بھاشا او رداسو ڈیم سمیت کوئلے سے بجلی پیدا کرنے والے منصوبوںکی تکمیل کے بعد تیل سے مہنگی بجلی پیدا کرنے والے بجلی گھروں کو بتدریج ختم کر دیا جائے گا، جس سے درآمدی بل میں کمی واقع ہو گی جبکہ وزیر پانی و بجلی خواجہ آصف نے تجویز دی کہ سستی بجلی پیدا کرنے کیلئے زیادہ سے زیادہ بجلی پانی سے پیدا کرنے کے منصوبوں کو یقینی بنایا جائے۔ دیامیر بھاشا ڈیم کی تعمیر پر آنے والے اخراجات سے متعلق امور کا جائزہ لینے کیلئے وزارتِ خزانہ میںمنعقدہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے اسحاق ڈار نے کہا کہ گزشہ سال تمام ملکی و عالمی مالیاتی ادارے دیامیر بھاشا ڈیم یا داسو ڈیم دونوں میں سے کسی ایک ڈیم کی تعمیر کو قابلِ عمل قرار دے رہے تھے لیکن موجودہ حکومت نے برسرِ اقتدار آنے کے بعد ان دونوں منصوبوں کا جائزہ لے کر انہیں بیک وقت تعمیر کرنے کا فیصلہ کیا جس کی عالمی مالیاتی اداروں نے بھی حمایت کی۔ انہوں نے کہا کہ ان بڑے ڈیموں کے علاوہ حکومت بونجی، پتن، تھا کوٹ، مونڈا ڈیموں سمیت داسو ٹو منصوبوں کو بھی تعمیر کرے گی تاکہ ملک میں سستی بجلی کی پیداوار کو یقینی بنایا جا سکے۔ اس موقع پر وزیر پانی و بجلی خواجہ آصف نے کہا کہ بجلی کے طلب و رسد میں فرق کم کرنے کیلئے وزارت بجلی کی پیداوار میں اضافے کی ہر ممکن کوشش کر رہی ہے۔ انہوں نے تجویز دی کہ سستی بجلی پیدا کرنے کیلئے زیادہ سے زیادہ بجلی پانی سے پیدا کرنے کے منصوبوں کو یقینی بنایا جائے۔ اس موقع پر چیئرمین واپڈا ظفر محمود نے تجویز دی کہ بجلی پیداوار کے تمام منصوبوں کی تیز ترین تعمیر کیلئے سرکاری و نجی شعبے کی شراکت داری ناگزیر ہے۔ علاوہ ازیں وزیر خزانہ اسحاق ڈار کی زیر صدارت نجکاری کمیشن کی کارکردگی کا جائزہ اجلاس ہوا۔ نجکاری کے وزیر مملکت محمد زبیر نے نجکاری پروگرام پر تفصیلی بریفنگ دی۔ انہوں نے بریفنگ میں بتایا کہ پہلے مرحلے میں پی پی ایل اور یو بی ایل کے حکومت ملکیت کے حصص فروخت کئے گئے او جی ڈی سی ایل کے حصص کی فروخت کا عمل ستمبر تک مکمل کرلیا جائے گا۔