امریکہ بیت المقدس کو اسرائیلی دارلحکومت تسلیم کرنے کافیصلہ فوری واپس لے، راولپنڈی با ر

راولپنڈی(نیوز رپورٹر) امریکہ کی جانب سے بیت المقدس کو اسرائیلی دارلحکومت تسلیم کرنے پر راولپنڈی با ر ایسوسی ایشن کے وکلاء نے شدید غم و غصے کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ اقدام اقوام متحدہ کے قوانین کی کھلم کھلا خلاف ورزی ہے امریکہ یہ فیصلہ فوری واپس لے۔ ان خیالات کا اظہا ر راولپنڈی بار کے صدر سجاد اکبر عباسی، سیکرٹری جنرل عرفان احمد خان نیازی، نائب صدر چوہدری فراغت جوائنٹ سیکرٹری شاہد محمود اور ایگزیکٹو باڈی کے ممبران نے ایک مشترکہ بیان میں کیا۔ اس سلسلے میںراولپنڈی بار کے صدر سجاد اکبر عباسی نے آج 8 دسمبر بروز جمعہ دن 11بجے قائد اعظم ہال میں جنرل باڈی کا ہنگامی اجلاس طلب کر لیا ہے ۔ راولپنڈی بار کے صدر سجاد اکبر عباسی نے کہا کہ مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت قرار دینا بلا جواز اور غیر ذمہ دارانہ ا قدام ہے۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے فیصلے سے فلسطینیوں کے ساتھ تعصب ظاہر ہوتاہے ۔ انہوںنے کہا امید ہے کہ عالمی برادری کی خواہش کو دیکھتے ہوئے امریکی انتظامیہ اپنا فیصلہ واپس لے لے گی، دنیا میں پہلے ہی کم تنازعات اور خوف موجود تھا جو امریکا کی طرف سے ایک اور متنازع فیصلہ کر لیا گیا، فیصلے سے مزید کشیدگی بڑھے گی۔ سیکرٹری جنرل عرفان احمد خان نیازی نے کہا کہ امریکا کی جانب سے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنے سے تنازعات میں اضافہ ہوگا اور دنیا کا امن خطرے میں پڑ جائے گا۔ٹرمپ مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت بنا کر کشیدگی کا نیا عنصر شامل نہ کریں۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ یہ فیصلہ فوری واپس لیا جائے۔