فوجی افسران کیخلاف مقدمہ عام عدالتوں میں چل سکتا ہے یا نہیں؟ سپریم کورٹ آج غور کرے گی

اسلام آباد (آن لائن) سپریم کورٹ (آج) پیر سے شروع ہونے والے ہفتہ کے دوران اس اہم قانونی سوال پر غور کرے گی کہ کیا آئینی و قانونی طور پر فوجی افسران کے خلاف مقدمات عام عدالتوں میں چل سکتے ہیں یا نہیں؟ اس حوالہ سے عدالت نے پہلے ہی اٹارنی جنرل اور چاروں صوبوں کے ایڈووکیٹس جنرل کو نوٹس جاری کر دیئے ہیں تاکہ وہ پیش ہوکر اس حوالہ سے قانونی نکتہ نظر پیش کر سکیں۔یہ سوال  مالاکنڈ حراستی مرکز سے اٹھائے گئے 35 لاپتہ سمیت دیگر لاپتہ افراد کے مقدمات کی سماعت کے دوران کھڑا ہوا ہے۔جس پر عدالت نے  استفسار کیا ہے کہ  کیاآئینی و قانونی حوالہ سے فوجی افسران کیخلاف مقدمہ عام عدالتوں میں چلایا جاسکتا ہے یا نہیں؟
فوجی افسران/مقدمہ