شمالی وزیرستان سے نقل مکانی کرنے والے 5 لاکھ 72 ہزار 529 افراد کا اندراج

اسلام آباد (نوائے وقت رپورٹ + ایجنسیاں) شمالی وزیرستان ایجنسی  سے نقل مکانی کرنے والے 44 ہزار 633 خاندانوں کے 5 لاکھ 72 ہزار 529  افراد کا اندراج کیا گیا ہے۔ نقل مکانی کرنیوالوں کو بجلی کی بلاتعطل فراہمی، صحت کی سہولیات اور پینے کے  پانی کی فراہمی سمیت ہر ممکن سہولتیں فراہم کی جا رہی ہیں۔ متاثرین میں امدادی رقوم کی تقسیم کیلئے جدید نظام اپنایا گیا ہے۔ شمالی وزیرستان سے نقل مکانی کرنے والے افراد سے متعلق رابطہ کار اور نگران اداروں نے وزیراعظم محمد نواز شریف کو رپورٹ پیش کی۔ انہوں نے رپورٹ میں بتایا ہے کہ 27 ہزار 664 خاندانوں کو 32  کروڑ 95  لاکھ روپے امداد فراہم کی گئی ہے۔ وفاقی حکومت کی جانب سے ساڑھے چار ہزار ٹن امدادی اشیا 31 ہزار خاندانوں میں تقسیم کی گئیں۔ 31 ہزار خاندانوں میں نان فوڈ آئٹم تقسیم کئے گئے۔ متاثرین کی امداد کیلئے وزارت خزانہ نے اب تک ڈیڑھ ارب روپے جاری کئے ہیں۔ کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی نے 60 ہزار ٹن گندم متاثرین کو دینے کی منظوری دی، نقل مکانی کرنے والوں کو فراہم کی جانے والی گندم کی مالیت  2 ارب 80 کروڑ روپے ہے، فوج نے ملک بھر میں امدادی اشیاء  اکٹھی کرنے کیلئے 33 مراکز قائم کئے ہیں۔ کیمپوں میں متاثرین کو مکمل طبی سہولتیں فراہمی کی جا رہی ہیں، بچوں کو پولیو کے قطرے پلائے جا رہے ہیں، عارضی  مساجد بنائی گئی ہیں، پینے کے صاف پانی کی مسلسل فراہمی یقینی بنائی جا رہی ہے، روزانہ خوراک کے پانچ ہزار تھیلے تقسیم کئے جا رہے ہیں۔  8 جولائی سے ہر متاثرہ خاندان کو زونگ موبائل کنکشن کے ذریعے رقوم کی فراہمی شروع ہو جائے گی۔ متحدہ عرب امارات نے انسانی بنیادوں پر متاثرین کیلئے دو کروڑ ڈالر سے زائد اور امریکہ نے متاثرین کیلئے تین کروڑ دس لاکھ ڈالر امداد دی۔ ریسکیو 1122 نے متاثرین کیلئے جدید سہولیات سے آراستہ تین ایمبولینسیں فراہمی کی ہیں، بنوں، لکی مروت، ڈیرہ اسماعیل خان، کرک اور ٹانک میں 15 ویٹرنری ہسپتال قائم کئے۔
متاثرین/ رپورٹ