پاکستان افغانستان میں 2 ارب سے زائد مالیت کے تین منصوبے مکمل کریگا

اسلام آباد (آن لائن) سینٹرل ڈویلپمنٹ ورکنگ پارٹی نے سرکاری شعبے کے نو ترقیاتی منصوبوں کی منظوری دی ہے جن کی مالیت نوارب دس کروڑ روپے سے زائد ہے۔ یہ منظوری منصوبہ بندی اور ترقی کے وفاقی وزیر احسن اقبال کی زیر صدارت اسلام آباد میں ہونے والے ایک اجلاس میں دی گئی۔ دو ارب روپے سے زائد مالیت کے تین منصوبے افغانستان میں مکمل کئے جائیں گے جن میں جلال آباد میں ساٹھ بستروں کا نشتر کڈنی ہسپتال کابل میں دو سو بستروں کا جناح ہسپتال اور لوگر میں سو بستروں پر مشتمل نائب امین اللہ خان لوگر ہسپتال شامل ہیں۔ وفاقی وزیر نے کہا کہ یہ منصوبے افغانستان سے تعاون کے پاکستان پروگرام کا حصہ ہیں تاکہ افغانستان کی سماجی و اقتصادی بہتری میں مدد فراہم کی جا سکے۔ اجلاس میں لاہور میں یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی کے تقریباً دو ارب نوے کروڑ روپے کی لاگت سے ذیلی کیمپس کے قیام کی بھی منظوری دی گئی۔اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے احسن اقبال نے کہا حکومت پاکستان کو علم پر مبنی معیشت میں تبدیل کرنا چاہتی ہے۔