نیٹو اور عالمی ادارے مستثنیٰ‘ عوام سے فی لٹر پٹرول پر 30 روپے ٹیکس وصولی

اسلام آباد (آن لائن) وزارت پٹرولیم کی دستاویزات میں انکشاف کیا گیا ہے کہ مشرف دور میں کئے گئے معاہدوں کے تحت افغانستان میں نیٹو فورسز اور عالمی امدادی ایجنسیوں کو بغیر ٹیکس کے تیل فراہم کیا جا رہا ہے اور اس وجہ سے ان کو 42.38 روپے فی لٹر پٹرول دیا جا رہا ہے جبکہ پاکستانی عوام سے فی لٹر پر 28 روپے سے 30 روپے تک ٹیکس کی مد میں وصول کئے جا رہے ہیں اور پاکستان میں تیل کی قیمت 73 روپے لٹر ہو چکی ہے۔ قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے پٹرولیم کے اجلاس میں ڈائریکٹر جنرل آئل نے انکشاف کیا کہ وزارت تجارت کی پالیسی تبدیل نہیں کی جا سکتی۔ اس انکشاف پر اراکین کمیٹی حیران رہ گئے کمیٹی نے تمام صورتحال پر بریفنگ کیلئے آٹھ اپریل کو اوگرا حکام کو طلب کر لیا ہے۔