سینٹ سیکرٹریٹ کی لاجز خالی نہ کرنے والے سینیٹرز کی لسٹ تیار کرنے کی ہدایت

اسلام آباد (طاہر نیاز/ نیشن رپورٹ) متعدد سینیٹرز کی جانب سے ریٹائرمنٹ کے باوجود پارلیمنٹ ہائوس کے لاجز خالی نہ کرنے کی وجہ سے نومنتخب سینیٹرز کو رہائش اور دیگر سہولیات کی فراہمی میں مشکلات پیش آرہی ہیں۔ 11 مارچ کو ریٹائر ہونے والے سینیٹرز کے لئے 31 مارچ تک کی مہلت بھی ختم ہوگئی جس کے بعد جمعرات کے روز سینٹ سیکرٹریٹ نے ایک بار پھر ڈائریکٹر لاجز سی ڈی اے کو تاحال لاجز خالی نہ کرنے والے سینیٹرز کی فہرست تیار کرکے پیش کرنے کی ہدایت کی ہے۔ سینٹ ذرائع نے بتایا کہ 11 مارچ کو 51 سینیٹرز ریٹائر ہوئے تھے جس میں سے 12 دوبارہ سینیٹرز منتخب ہوگئے۔ باقی 39 سینیٹرز میں سے چند نے ہی اپنے سویٹس کا قبضہ سی  ڈی اے اتھارٹیز کے حوالے کیا ہے۔ سینٹ سیکرٹریٹ کے جوائنٹ سیکرٹری سروسز میجر (ر) سید حسنین حیدر نے  10 فروری کو ایک لیٹر میں ریٹائر ہونے والے سینیٹرز کو لاجز خالی کرنے کیلئے 30 مارچ تک گریس پیریڈ دیا تھا  اور ساتھ ہی ان سب سے اپنے یوٹیلیٹی بلز ادا کرنے کے حوالے سے این او سی حاصل کرنے کی ہدایت بھی کی تھی۔