طلباء فیس معافی سکیم آج پشاور میں شروع ہو گی، مریم نواز چیک تقسیم کرینگی

طلباء فیس معافی سکیم آج پشاور میں شروع ہو گی، مریم نواز چیک تقسیم کرینگی

اسلام آباد (نیوزایجنسیاں) وزیر اعظم کی طلبا فیس معافی سکیم (آج) پیر کو پشاور میں شروع ہو گی، مریم نواز مستحق طلبا میں چیک تقسیم کریں گی۔ خیبر پی کے اور فاٹا کے ایم اے، ایم فل اور پی ایچ ڈی طلباء کو فیس واپس کی جائے گی۔ اس سکیم کے تحت مجموعی طور پر 30ہزار طلباء مستفید ہوں گے، سکیم کے لئے ایک ارب 20کروڑ روپے مختص کئے گئے۔ نجی ٹی وی کے مطابق وزیر اعظم یوتھ پروگرام کی چیئرپرسن مریم نواز شریف کی زیر صدارت ہونے والے اجلاس میں فیصلہ ہوا ہے کہ وزیر اعظم کی طلباء کو فیس معافی سکیم پر عمل درآمد (آج) پیر سے پشاور میں شروع ہو گا جس میں پسماندہ علاقوں کے بچوں کو یوتھ پروگرام کے تحت فیس واپس کی جائے گی۔ اس سکیم کے تحت مجموعی طور پر 30ہزار طلباء مستفید ہوں گے جن میں سے 6ہزار طلباء کا تعلق فاٹا اور خیبر پی کے سے ہے۔ اجلاس میں کئے جانے والے فیصلے میں جنوبی پنجاب کے طلباء کے لئے 100فیصد تعلیمی اخراجات واپس کرنے کا شیڈول منظور کیا گیا جبکہ اندرون سندھ، آزاد کشمیر، گلگت بلتستان کے طلباء کے تعلیمی اخراجات واپس کرنے کا شیڈول بھی منظور ہوا ہے۔ اجلاس میں بتایا گیا کہ فیسوں کی واپسی کے پروگرام کا افتتاح گذشتہ ماہ کی 21 تاریخ کو بلوچستان میں وزیر خزانہ محمد اسحاق ڈار نے کیا تھا۔ وزیراعظم یوتھ پروگرام کی چیئرپرسن مریم نواز شریف نے اجلاس کے شرکاء کو بتایا کہ موجودہ جمہوری حکومت نے اقتصادی مسائل کے خاتمہ اور نوجوانوں کو مواقع فراہم کرنے کیلئے اپنے وعدے کو حقیقت میں بدلا ہے اور ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل سے تصدیق شدہ شفاف سکیم شروع کی ہے جو وزیراعظم نواز شریف کے وژن کی عکاس ہے۔ حکومت ترقی یافتہ علاقوں کے ساتھ ساتھ کم ترقی یافتہ علاقوں کے طلبہ کو اعلیٰ تعلیم تک رسائی کے مساوی مواقع فراہم کر رہی ہے اور اس سلسلہ میں سکیم کا آغاز سب سے پہلے بلوچستان سے کیا گیا ہے جہاں پر طلبہ کو سو فیصد فیسوں کی واپسی کی گئی ہے۔ اب اعلیٰ تعلیم کے حصول میں مالی مشکلات حائل نہیں ہو سکیں گی، سکیم کے تحت اندرون سندھ، جنوبی پنجاب، بلوچستان، خیبر پی کے، فاٹا، آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان کے طلبہ کے سو فیصد تعلیمی اخراجات واپس کئے جائیں گے۔