فوجی کارروائی سے مسائل حل نہیں ہوتے مالیاتی بحران کا ذمہ دار امریکہ ہے: روس‘ چین

ڈیووس (ثناء نیوز) ڈیووس میں جاری عالمی اقتصادی فورم میں مختلف ممالک کے سربراہوں معروف سرمایہ داروں اور اقتصادی ماہرین نے عالمی اقتصادی بحران کے اسباب کا جائزہ لیا اور اس پر قابو پانے کے لئے تجاویز پیش کیں ۔ مقررین نے ترقی پزیر ممالک میں قرضوں کے بوجھ اور سرمایہ کاری کے فقدان کو خطرہ قرار دیا بعض عالمی رہنمائوں نے امریکہ کو موجودہ عالمی بحران کا ذمہ دار قرار دیا ۔ چین اور روس کے وزیر اعظم نے امریکہ کو مالیاتی بحران کا ذمہ دار قرار دیتے ہوئے مالیاتی اصلاحات میں تبدیلی کا مطالبہ کیا ۔ چینی وزیر اعظم نے امید ظاہر کی کہ خراب صورت حال کے باوجود اقتصادی ترقی کا 8 فیصد ہدف حاصل کر لیا جائے گا ۔ روسی وزیر اعظم نے کہا کہ فوجی کارروائیوں سے مسائل حل نہیں ہو سکتے، روس دفاعی بجٹ میں اضافے کے خلاف ہے اسرائیل کے سابق وزیر اعظم بنجمن نیتن یاہو نے کہا کہ ایران کو جوہری ہتھیاروں سے روکنا اقتصادی بحران سے بھی اہم ہے۔ ایران نے ایٹمی ہتھیار حاصل کر لئے تو اس کی تلافی نہیں ہو سکے گی۔ سابق صدر بل کلنٹن نے کہا کہ ایک سال یا 15 ماہ میں امریکہ اقتصادی بحران سے نکل آئے گا لیکن اس کے لئے کانگریس کی جانب سے اوباما انتظامیہ کے منصوبوں کی بھرپور حمایت درکار ہو گی ۔