مصر: اشتعال پھیلانے کے الزام میں اخوان المسلمون کے 17مذہبی رہنما گرفتار

قاہرہ (اے ایف پی+این این آئی) تنظیم  اخوان المسلمون کے 17 مذہبی رہنماؤں کو مساجد میں اپنے خطبوں کے ذریعے فوج اورپولیس کے خلاف اشتعال پھیلانے کے الزام میں غربیہ کے قصبے سے گرفتار کرلیا گیا۔ ادھر  سابق مصری صدر حسنی مبارک کے دور میں اسلام پسند وں پر تشدد کے کیس میں عدالت نے تین پولیس اہلکاروں کو بری کر دیا، تینوں پر زیر حراست پانچ افراد کو بجلی کے جھٹکے لگائے، بھوکا رکھنے اور مارنے پیٹنے کے الزامات لگائے گئے تھے۔۔ مرسی کے حامیوں نے قاہرہ یونیورسٹی میں مظاہرہ کیا،  پولیس نے آنسو گیس کے شیل پھینکے اور گولی چلا دی جس سے ایک طالب علم مارا گیا۔