’’تم مسلمان ہو‘‘ ممبئی میں گجرات کی لڑکی کو فلیٹ سے نکال دیا گیا

ممبئی (نیوز ڈیسک) بھارت میں مودی سرکار کیا برسراقتدار آئی مسلمان بن کر جینا اس ملک میں دوبھر کردیا۔ ممبئی میں ایک مسلم نوجوان ذیشان کو محض مسلمان ہونے کی وجہ سے ملازمت دینے سے انکار کیا گیا تھا۔ اب ایک مسلمان لڑکی کو فلیٹ سے نکال دیا گیا۔ ریاست گجرات کی مصباح قادری جو ملازمت کے سلسلے میں ممبئی میں مقیم ہے، نے وڈالا میں ایک فلیٹ کرائے پر لیا تاہم اگلے روز پراپرٹی ڈیلر نے فون کرکے مصباح کو فلیٹ میں داخلے سے منع کردیا اور کہا کہ وہ چونکہ مسلمان ہے اس لئے یہاں کے رہائشیوں کو یہ بات پسند نہیں۔ مصباح کے احتجاج پر پراپرٹی ڈیلر نے کہا کہ اگر اسے فلیٹ میں رہنا ہے تو این او سی دینا ہوگا کہ اگر اسے کسی نے تنگ کیا تو وہ مالک فلیٹ اور پراپرٹی ڈیلر کیخلاف قانونی کارروائی نہیں کرے گی۔ مصباح نے معاملے کی نیشنل کمشن فار مینارٹیز کو شکایت کردی۔