پاکستان میں موجود امریکی ماہر ایٹمی ہتھیار عسکریت پسندوں کے ہاتھ لگنے سے روکیں گے: مڈل ایسٹ ٹائمز کا دعویٰ

واشنگٹن (نیٹ نیوز) ’’مڈل ایسٹ ٹائمز‘‘ کی ایک رپورٹ کے مطابق پاکستان میں موجود امریکی ماہرین کا ایک کام یہ بھی ہے کہ وہ سیاسی انتشار کی صورت میں ایٹمی ہتھیاروں کو عسکریت پسندوں کے ہاتھ لگنے سے روکیں۔ رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ متعدد امریکی حاضر سروس اور ریٹائرڈ حکام نے اس بات کی تصدیق کی ہے۔ رپورٹ میں یہ دعویٰ بھی کیا گیا ہے کہ بعض امریکی تکنیکی ماہرین کو پاکستانی ایٹمی ہتھیاروں کے مقام وغیرہ سے آگاہی حاصل ہے۔ تاہم ان امریکی حکام کا کہنا ہے کہ پاکستانی ایٹمی ہتھیار ابھی تک محفوظ ہیں۔ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ 2000ء میں کلنٹن انتظامیہ نے پاکستان اور امریکی سائنسدانوں پر مشتمل ایک بورڈ تشکیل دیا تھا جس نے پاکستانی ایٹمی ہتھیاروں کے کمانڈ اینڈ کنٹرول سسٹم کی تشکیل کیلئے کئی کوڈ وضع کئے تھے۔