بابا گورونانک کا جنم دن، 2ہزار سے زائد سکھ یاتری ننکانہ پہنچ گئے


ننکانہ صاحب+ گوجرانوالہ (نمائندہ نوائے وقت+ نامہ نگار+ نمائندہ خصوصی) با با گورونانک کے 544ویں جنم دن کی تقریبات میں شرکت کیلئے 2387سکھ یاتری پارٹی لیڈر ڈاکٹر جنگ بہادر سنگھ رائے اور ڈپٹی پارٹی لیڈر سردار گلزار سنگھ برار کی قیادت میں تین ٹرینوں کے ذریعے ننکانہ پہنچ گئے۔ یاتریوںکو سخت سکیورٹی میںضلعی گورنمنٹ کی طرف سے مہیا کردہ بسوں کے ذریعے گورودوارہ جنم استھان پہنچایا گیا یاتریوں کے لیڈر سردار جنگ بہادر نے صحافیوں سے باتیں کرتے ہوئے کہا کہ گورودواروں کی دیکھ بھال دیکھ کر دل خوش ہو گیا پاکستانی حکومت سکھوں کے مقدس مقامات پر بہت توجہ دے رہی ہے میں دونوں ملکوں کی حکومتوں سے اپیل کر تا ہوں کہ آپس میں محبت اور پیار سے رہےں۔ علاوہ ازیں گوردوارہ جنم استھان ننکانہ صاحب پر سکھوں نے اپنی رسومات ”اکھنڈ پاٹھ“ کی ادائیگی سے شروع کر دی ہیں۔ پاکستان سے مزید ہندو اور سکھوں کی آمد کا سلسلہ جاری ہے۔ علاوہ ازیں بابا گورونانک دیوجی کے جنم دن کی تقریبات میں شرکت کیلئے آنیوالا ہندو نوجوان 17سالہ ٹیکم داس اشنان کرتے ہوئے تالاب میں ڈوب کر ہلاک ہو گیا۔ علاوہ ازیں تقریبات میں حصہ لینے کے لئے آئی ہندو خاتون دل کا دورہ پڑنے سے جاں بحق ہو گئی۔ پندرہ خاتون اندرون پاکستان لاڑکانہ سے 65سالہ ہندو خاتون گجری لال اپنی فیملی کے ساتھ اتوار کے روز گورودوارہ جنم استھان ننکانہ صاحب آئی ہوئی تھی۔ علاوہ ازیںگوجرانوالہ گورودوارہ روہڑی صاحب ایمن آباد میں گذشتہ روز سینکڑوں سکھ یاتریوں نے حاضری دی۔ ٹی ایم اے کھیالی شاہ پور ٹاﺅن کے علاقہ ایمن آباد میں واقع گورودوارہ روہڑی صاحب میں 450 سے زائد مرد‘ خواتین بچوں پر مشتمل سکھ یاتری جو برطانیہ سے اپنے گورودوارہ پر حاضری کے لئے آئے ہوئے تھے جن کو مکمل سکیورٹی کے ساتھ ان کی عبادت گاہ میں لایاگیا۔