امریکہ نے نائن الیون حملوں سے قبل ہی غیر ملکی حکام سفیروں کی جاسوسی شروع کر دی تھی : سابق عہدیدار امریکی خفیہ ادارہ

امریکہ نے نائن الیون حملوں سے قبل ہی غیر ملکی حکام سفیروں کی جاسوسی شروع کر دی تھی : سابق عہدیدار امریکی خفیہ ادارہ

 نیویارک(آن لائن) امریکی خفیہ ادارے کی سابق عہدیدار سوسان لنڈایوز نے انکشاف کیا ہے کہ امریکہ نے نائن الیون حملوں سے قبل ہی غیر ملکی حکام اور اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے ارکان کی جاسوسی شروع کردی تھی ۔ سلامتی کونسل کے رکن مما لک کی بھی جاسوسی شروع کردی تھی۔ ہم اس جاسوسی پروگرام کے ذریعے غیر ملکیوں کو اہداف بناتے ہیں جو امریکی قوانین کی خلاف ورزی کے مرتکب ہوتے ہیں اور ہماری پالیسیوں کو نقصان پہنچاتے ہیں۔
سابق امریکی عہدیدار