فیصل شہزاد کے حوالے سے دستاویزات امریکہ نے پاکستان کے حوالے کردی ہیں جن میں فیصل کے طالبان کے ساتھ رابطوں کا چارٹ بھی شامل ہیں۔

فیصل شہزاد کے حوالے سے دستاویزات امریکہ نے پاکستان کے حوالے کردی ہیں جن میں فیصل کے طالبان کے ساتھ رابطوں کا چارٹ بھی شامل ہیں۔

امریکی اخبارلاس اینجلس ٹائمز کے مطابق  فیصل شہزاد سے متعق یہ ثبوت امریکی سی آئی اے کے سربراہ لیون پینیٹا  اور قومی سلامتی کے مشیرجیمز جونزنے اپنے دورہ اسلام آباد کے موقع پر صدر آصف زرداری سے ملاقات میں پیش کیے ۔ اخبار کے مطابق ان دستاویزات میں حملے کی سازش سے قبل  فیصل شہزاد کے پاکستانی طالبان سے رابطے کا چارٹ بھی شامل ہے۔ دستاویزات میں کہا گیا ہے کہ فیصل شہزاد کو امداد فرہم کرنے والے گرپوں کا تعلق القاعدہ سے ہے۔ اخبار کے مطابق امریکہ کی جانب سے پاکستان پر زور دیا گیا ہے کہ وہ پاکستان میں سرگرم کالعدم تحریک طالبان سمیت دیگر شدت پسندوں کے خلاف کارروائی میں تیزی لائے۔ اخبار کا مزید کہنا ہے کہ دونوں امریکی عہدیداروں نے صدر زرداری سے ملاقات میں واضح کیا کہ اگر آئندہ امریکہ پر حملہ ہوا تو وائٹ ہاؤس پر پاکستان کے خلاف کارروائی کرنےکے لیے دباؤ بڑھ جائے گا۔ اخبار نے یہ بھی دعویٰ کیا ہے کہ امریکی عہدیداروں سے ملاقات میں پاکستانی حکام نے ملکی طالبان کی جانب سے فیصل شہزاد کو مدد فراہم کرنے کا بھی اعتراف کیا ہے۔