اوباما ایران کے اندرونی معاملات میں مداخلت بند کریں : احمدی نژاد

تہران (مانیٹرنگ نیوز+اے ایف پی) ایران کے صدر احمدی نژاد نے امریکی صدر کو انتباہ کیا ہے کہ وہ ایران کے اندرونی معاملات میں مداخلت بند کریں۔ احمدی نژاد نے کہا کہ اوباما وہی زبان ایران کیخلاف بول رہے ہیں جو بش بولتے رہے ہیں ان کا کہنا تھا کہ ہم خوددار اور خودمختار قوم ہیں۔ ہم کسی دھونس اور سازش کا شکار ہونے والے نہیں۔ اپنی سلامتی کا دفاع کرنا جانتے ہیں۔ ادھر ایران میں حزب اختلاف کے رہنما میر حسین موسوی نے کہا ہے کہ وہ حالیہ احتجاجی مظاہروں میں ہلاکتوں کا ذمہ دار صدارتی انتخاب میں ’’دھاندلی‘‘ کرنے والوں کو ٹھہراتے ہیں۔ انہوں نے اپنی ویب سائٹ پر لوگوں سے کہا ہے کہ وہ مستقبل میں احتجاجی مظاہرے اس طرح کریں کہ ’’جس سے کوئی تناؤ پیدا نہ ہو‘‘ انہوں نے الزام لگایا کہ ان کے لوگوں سے ملنے پر مکمل پابندیاں لگائی گئی ہیں اور ان کے میڈیا گروپ کیخلاف بھی کارروائی کی گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ’’میں ذاتی مفاد اور دھمکیوں کے خوف سے ایرانی عوام کے حقوق حاصل کرنے سے دستبردار نہیں ہوں گا‘‘ انہوں نے کہا کہ ان پر الیکشن دھاندلی کے الزام سے دستبردار ہونے کیلئے شدید دباؤ ہے۔ دوسری جانب مقامی ذرائع ابلاغ کے مطابق ایک سو سے زیادہ ارکان پارلیمان نے اس تقریب میں شرکت نہیں کی جو صدر احمدی نژاد کی انتخابات میں کامیابی کا …… منانے کیلئے منعقد کی گئی تھی۔ اطلاعات کے مطابق تقریب میں تمام دو سو نوے ارکان کو مدعو کیا گیا تھا تاہم ایک سو پانچ ارکان اس میں شریک نہیں ہوئے۔