مقبوضہ کشمیر: جھڑپ میں شہری کی ہلاکت کے خلاف مکمل ہڑتال، ریلیاں، فوجی کیمپ میں دھماکہ، انسپکٹر سمیت3 اہلکار زخمی

سرینگر (آن لائن+ اے این این+نوائے وقت رپورٹ) مقبوضہ کشمیر میں کولگام جھڑپ کے دوران دو مجاہدین کے ساتھ ایک عام شہری کی ہلاکت کے خلاف منگل کو عام ہڑتال رہی ۔ہڑتال کی اپیل کل جماعتی حریت کانفرنس ’’گ‘‘ گروپ کے چیئرمین سید علی گیلانی نے دے رکھی تھی۔ اس موقع پر تمام کاروباری مراکز، تعلیمی ادارے، دفاتر اور بینک بند رہے۔ سڑکوں پر ٹریفک کا نظام بھی مفلوج رہا۔ کولگام میں کشمیریوں نے احتجاجی ریلیاں بھی نکالیں اور وادی میں بھارتی فورسز کے بڑھتے ہوئے مظالم کے خلاف نعرے بازی کی۔ اس موقع پر بھارتی فوجیوں نے کشمیریوں کی ریلیوں کو روکتے ہوئے ان پر تشدد کا بہیمانہ استعمال کرتے ہوئے انہیں منتشر ہونے پر مجبور کر دیا۔ مقبوضہ کشمیر کے علاقے بارہمولہ میں واقع فوجی کیمپ میں دھماکہ ایک انسپکٹر سمیت 3 اہلکار زخمی ہوگئے، علاج کیلئے سرینگر منتقل کردیاگیا۔ تفصیلات کے مطابق ضلع اسپتال بارہمولہ کے قریب قائم فوج کی مختلف یونٹوں کے قائم کیمپوں میںایک زوردار دھماکہ ہوا جس کے نتیجے میں سراغ رساں ایجنسی سے وابستہ 3 اہلکار زخمی ہوگئے جن میں ایک انسپکٹر بھی شامل ہے۔ پولیس نے بتایا کہ یہ دھماکہ ایک کمپیوٹر سسٹم میں شارٹ سرکٹ کی وجہ سے ہوا جس کے نتیجے میں ایک انسپکٹر سمیت 3اہلکار زخمی ہوگئے، جن میں اشوک کمار، آکاش اور سمیر شامل ہیں۔ دوسری جانب ریڈونی کولگام میں ایک بے گناہ نوجوان کی تازہ ہلاکت میں ملوث ٹاسک فورس کے5اہلکاروں کو حراست میں لے کران پر قتل کا مقدمہ درج کیا گیا۔ مقبوضہ کشمیر کی حریت قیادت نے ریڈونی جھڑپ میں شہید ہونے والے مجاہدین کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ فرضی جھڑپوں میں نہتے نوجوانوں کو شہید کرنا ریاستی ظلم و جبر کی بدترین مثال ہے۔ مسئلہ کشمیر کو دھونس، دبائو یا فوجی طرز عمل سے حل نہیں کیا جاسکتا۔ مسئلہ کشمیر ایک زندہ حقیقت ہے اسے جھٹلایا نہیں جاسکتا ۔ حریت کانفرنس (گ) کے چیئرمین چیئرمین سید علی گیلانی کی ہدایت پر تحریک حریت سے وابستہ وفد ریڈونی گیا اور شہداء کی نماز جنازہ اور احتجاجی مظاہرے میں شرکت کی۔ گیلانی نے اپنے بیان میں عسکریت پسندوں کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے نوجوان بھارت کے فوجی قبضے کے خلاف شعوری طور سرفروشی کا راستہ اختیار کرتے ہیں اور وہ اپنی قوم کے روشن مستقبل کے لیے اپنی اٹھتی جوانیوں کو قربان کررہے ہیں۔ حز ب المجاہدین نے ریڈونی کولگام میں جاں بحق ہونے والے مجاہدین کوخراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہاہے کہ مسئلہ کشمیرکے حل تک جدوجہدجاری رکھی جائیگی۔ مقبوضہ کشمیر میں واقع ہری فوجی کیمپ میں تعینات ایک بھارتی فوجی اہلکار کرنٹ لگنے سے ہلاک ہوگیا۔بھارتی فوجی اہلکارجو ٹی اے 160بٹالین میں بحیثیت رائفل مین تعینات تھا کرنٹ لگنے سے ہلاک ہوگیا۔ دختران ملت کی سربراہ سیدہ آسیہ اندرابی نے کہا ہے کہ سید علی گیلانی کو یوگا سیکھنے کے مشورے دینے والے پہلے اپنے دماغ کا علاج کروائیں لال سنگھ اور اس کے حواریوں کو یہ بات جان لینی چاہیے کہ ایک عام مسلمان بھی تم سے ہزار درجہ بہتر عقل و دانش رکھتا ہے۔ ضلع مجسٹریٹ کولگام نے ریڈونی جھڑپ میں عام شہری کی ہلاکت اور عوامی جائیداد کو نقصان پہنچنے کی مجسٹریل انکوائری کے احکامات صادر کردیئے ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر کولگام انکوائری آفیسر ہونگے ایک ماہ کے اندر اندر تحقیقاتی رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔