کابل : بم دھماکوں‘ جھڑپوں میں 3 اتحادی فوجی ہلاک‘ 15 طالبان شہید

کابل (اے ایف پی) افغانستان میں بم دھماکوں اور تشدد کے دیگر واقعات ومیں 3 اتحادی‘ 8 افغان فوجی‘ 3 خواتین ہلاک اور 15 طالبان شہید ہوگئے۔ طالبان نے ضلع شائیگل کے پولیس سربراہ کو 2 اہلکاروں سمیت اغواءکر لیا۔ جنوبی افغانستان میں سڑک کے کنارے نصب بم پھٹنے کے نتیجے میں 2 امریکی اور ایک برطانوی فوجی مارا گیا۔ رواں سال ہلاک ہونے والے امریکی فوجیوں کی تعداد 22 ہوگئی ہے۔ ادھر صوبہ میدان وردگ میں گورنر محمد حلیم فدائی کے قافلہ کے راستے میں نصب بم پھٹنے سے 4 پولیس اہلکار ہلاک جبکہ گورنر بال بال بچ گئے۔ ترجمان شاہد اللہ شاہد کے مطابق بم دھماکہ کے بعد طالبان نے فائرنگ بھی کی تاہم جوابی کارروائی کے دوران دومشتبہ افراد کو گرفتارجبکہ دیگر فرار ہوگئے۔ صوبہ پکتیکا میں طالبان کی ٹیکسی پر فائرنگ سے 3 خواتین ہلاک اور تین افراد زخمی ہوگئے۔ دیں اثناءصوبہ خوست کے ضلع تنائی میں کھلونا بم پر پاﺅں پڑنے سے معصوم بچہ جاں بحق ہوگیا۔ ادھر ہلمند کے ضلع کریشک میں نیٹو اور افغان فوج کے مشترکہ آپریشن میں 15 طالبان شہید ہوگئے۔ قبل ازیں صوبہ غزنی میں اتحادی فوج کے آپریشن میں شہریوں کی ہلاکت کے خلاف مظاہرہ کیا گیا۔ مظاہرین ضلع کرہ باغ میں پولیس کے کیمپ پر دہاوہ بولنے کی کوشش کی تو سیکیورٹی فورسز نے فائرنگ کر کے 2 مظاہرین کو زخمی کر دیا۔ مظاہرین بعدازاں پرامن منتشر ہوگئے۔