استنبول میں ہونے والے جوہری مذاکرات سے ایران اور مغربی ممالک کے تعلقات بہتر ہو سکتے ہیں۔ احمدی نژاد

استنبول میں ہونے والے جوہری مذاکرات سے ایران اور مغربی ممالک کے تعلقات بہتر ہو سکتے ہیں۔ احمدی نژاد

ایران کے صدراحمدی نژاد نے یہ بات استنبول میں اقتصادی تعاون کی تنظیم کے اجلاس کے موقع پرترک صدر عبداللہ گل سے ملاقات کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہی۔ انہوں نے کہا کہ ایران اور ترکی میں یہ ملاقات سنگ میل کی حیثیت رکھتی ہے۔ ایران اور ترکی کے تعلقات بہت مضبوط ہیں جنھیں ایک دن میں خراب نہیں کیا جا سکتا۔ ان کا کہنا تھا کہ بڑی طاقتیں ایران کو جوہری توانائی کے حصول سے اس لیے دور رکھنا چاہتی ہیں کہ وہ اسے ہتھیار بنانے کے لیے استعمال نہ کرے۔ ایرانی صدر نے واضح کیا کہ ان کا جوہری پروگرام پُر امن اور محض توانائی کے حصول کے لیے ہے۔ ایرانی صدر احمدی نژاد ترکی کے دورے کے بعد پاکستان، افغانستان اور وسطی ایشیا کے ممالک کا دورہ بھی کریں گے۔