اقوام متحدہ کےسیکرٹری جنرل بان کی مون نےکہا ہےکہ کشمیرمیں تشدد کا سلسلہ فوری ختم کیا جائے،

اقوام متحدہ کےسیکرٹری جنرل بان کی مون نےکہا ہےکہ کشمیرمیں تشدد کا سلسلہ فوری ختم کیا جائے،

نیویارک میں بان کی مون کے ترجمان نےمیڈیا کوبتایا کہ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل بان کی مون نے کشمیر میں پرتشدد واقعات میں جاں بحق ہونے والے افراد سے اظہارافسوس کیا ہے۔ انہوں نےکہاکہ بھارتی حکومت کشمیری قیادت کے ساتھ بیٹھ کرتنازع کا پرامن حل تلاش کرے۔یو این میلینیئم ڈویلپمنٹ گول کانفرنس کے دوسرے دن اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل بان کی مون نے پاکستانی وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی سےملاقات کی۔ ملاقات میں پاکستان کے اندرسیلاب کی تباہ کاریوں ،متاثرین بحالی اوردیگرامورپرتبادلہ خیال کیا۔ اس سے پہلے میلینیئم ڈویلمپنٹ گول کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ دہشتگردی اورسیلاب نے پاکستان کو بری طرح متاثرہ کیا،معاشی بحالی کے لیے اربوں ڈالرکی ضرورت ہے۔ وزیرخارجہ نے کہا کہ چند سال پہلےتک پاکستان میلینیئم ڈویلپمنٹ گول کے حصول کے ٹریک پر تھا لیکن دہشتگردی کے خلاف جنگ نے معیشت پراثرات مرتب کیے،اورحالیہ سیلاب نے صنعتوں،فصلوں، مویشی اور موصلااتی نظام کوبری طرح تباہ کرکے رکھ دیا ہے۔شاہ محمود قریشی کاکہنا تھا کہ خواتین کوبااختیاربنانا موجودہ حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے، اس سلسلے میں پاکستان کی مدد کی جائے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اپنی ذمہ داریوں سے آگاہ اوردنیا کوخوشحال اور پرامن بنانے کا عزم رکھتا ہے۔