مقبوضہ کشمیر : ڈھونگ انتخابات کے بائیکاٹ مہم روکنے کیلئے فوج کا کریک ڈاﺅن جاری‘ فریدہ بہن جی ساتھیوں سمیت گرفتار

سرینگر (اے این این +آن لائن) مقبوضہ کشمیرمیں کٹھ پتلی انتظامیہ کی جانب سے ڈھونگ انتخابات کے بائیکاٹ کی مہم روکنے کےلئے حریت پسندرہنماو¿ں وکارکنوں کی پکڑدھکڑکا سلسلہ بدستورجاری، دختران ملت سربراہ آسیہ اندرابی کے گھرپرچھاپہ، سید علی گیلانی ، میر واعظ عمر فاروق، شبیر احمد شاہ، محمد اشرف صحرائی، پیر سیف اللہ، راجہ معراج الدین،ایاز اکبراور محمد اشرف لایا بدستورگھروں میں نظربند ، سرینگر میں قابض فوجیوں کاپرامن مظاہرین پرتشدد،تین افراد زخمی ہوگئے ۔ تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیرمیں کٹھ پتلی ریاستی انتظامیہ نے ڈھونگ انتخابات کے بائیکاٹ کی مہم ناکام بنانے کے لئے حریت پسندرہنماو¿ں اورکارکنوں کی گرفتاریوں اورنظربندیوں کاسلسلہ درازکردیاہے اورگزشتہ روز دختران ملت کی سربراہ آسیہ اندرابی کی گرفتاری کےلئے ان کے گھر پر چھاپہ ماراگیاتاہم وہ گھرمیں موجود نہیں تھیں ، دوسری جانب سرینگر کے پائین شہر کے علاقے نواکدل میںنوجوانوں نے حریت رہنماو¿ں کی نظربندی وگرفتاری کے خلاف مظاہرہ کیا اس دوران مشتعل نوجوانوں نے قابض فوجیوں پرپتھراو¿بھی کیا جبکہ قابض فوج کی جانب سے مظاہرین کومنتشرکرنے کےلئے طاقت کاوحشیانہ استعمال کیاگیاجس کے نتیجے میں تین نوجوان زخمی ہوگئے ۔ بھارتی پولیس نے حریت رہنماءاور ماس موومنٹ کی سربراہ فریدہ بہن جی کو پارٹی رہنماﺅں مولوی بشیر احمد، عبدالرشید اوردرجنوں کارکنوں سمیت سرینگر کے علاقے آبی گذر سے ایک احتجاجی مظاہرے کے دوران گرفتار کرلیا۔ فریدہ بہن جی پارٹی رہنماﺅں اور کارکنوںکے ہمراہ آبی گذر میں سیاسی نظربندوں کی رہائی ، بھارت کے نام نہاد پارلیمانی انتخاب کے بائیکاٹ ایک مظاہرے کی قیادت کررہی تھی۔ گرفتاری سے قبل فریدہ بہن جی نے مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے عالمی برادری سے اپیل کی وہ کشمیریوںکی خواہشات کے مطابق مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے بھارت پر دباﺅ بڑھائے ۔ ادھر کولگام میں بھارت نوا ز پی ڈی پی کے نام نہاد انتخابی کنونشن پر پتھراﺅسے متعدد کارکن زخمی ہو گئے ۔ کنونشن میں نام نہاد وزیر عبدالحق خان ، نام نہاد اسمبلی کے رکن نذیر احمد لاوے ، عبدالمجید پڈرو کے علاوہ پی ڈی پی کے دیگر اراکین بھی موجود تھے ۔ پتھراﺅ سے افراتفری پھیل گئی اور متعدد افراد زخمی ہو گئے۔
کشمیر