آزاد کشمیر میں دراندازی کا خطرہ‘ بھارتی فوج نے ایل او سی پر نگرانی سخت کر دی

سری نگر (آن لائن + اے این این) بھارتی فوج نے دراندازی کے خطرے کے پیش نظر لائن آف کنٹرول پر نگرانی کو سخت کر دیا‘ کپواڑہ میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے جنرل آفیسر کمانڈنگ آف سری نگر لیفٹیننٹ جنرل سید عطاءحسنین نے کہا کہ موسم سرما میں برف باری سے قبل سرحد پار سے دراندازی کی کوششوں میں اضافے کا امکان ہے۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ مقبوضہ کشمیرسے سرحد پار عسکری تربیت کےلئے جانے والے 500 سے زائد افراد اس وقت پاکستانی جیلوں میں قید ہیں ۔جبکہ کئی لوگ سرحدوں پر دراندازی کی کوشش کے دوران فوج کے ساتھ جھڑپ میں مارے گئے۔ آزاد کشمیر کی نیلم اور لیپا وادی میں 400 عسکریت پسند دراندازی کےلئے موقع کے انتظار بیٹھے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ ریاست میں دریافت ہونےوالی بے نام قبروں میں وہ عسکریت پسند مدفون ہیں جو جھڑپوں کے دوران وادی کے مختلف علاقوں میں مارے گئے۔ انہوں نے بتایا کہ سوپور میں ہلاک ہونےوالے عسکریت پسند کا نام عبد اللہ ہی تھا جو گزشتہ چار برسوں سے سوپور میں اپنی سرگرمیاں جاری رکھے ہوا تھا۔ ریاست سے فوج میں تخفیف کرنے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔
دراندازی