فٹ بال میچ دیکھنا حرام ہے، مصری عالم دین کا فتویٰ

قاہرہ (آئی این پی) مصری عالم دین یاسر بوراہمی نے فٹ بال میچ دیکھنا حرام قرار دیدیا۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق  مصر کے سلفی عالم دین  یاسر بوراہمی نے فٹ بال میچ دیکھنے کو اسلامی نکتہ نگاہ سے ناقابل قبول قرار دیتے ہوئے کہا ہے یہ خالص پریشانی اور قوم کو تباہ کرنے والی سرگرمی ہے۔ عالمی کپ کے میچ دیکھنا ایک طرح کی تباہی ہے جو مجھے سخت ناگوار ہے۔ انہوں نے اپنے فتویٰ میںکہا  میچ دیکھنے میں کھوئے رہنا مذہبی اور عالمی ذمہ داریوں سے غافل ہو جانے کے مترادف ہے جس کا نتیجہ قومی تباہی کی صورت میں سامنے آتا ہے۔ فٹ بال میچ دیکھنے کے حرام کی مخصوص شرائط ہیں۔ اگر یہ میچ کسی شخص کو اس کی مذہبی ذمہ داریوں پر عمل درآمد سے روکتا ہے، انسانی جسم کے ان حصوں کے ظاہر کرنے کا ذریعہ بنتا ہے جنہیں ڈھانپنے کا حکم ہے، اسی طرح اگر یہ میچ مسلمانوں کے دلوں میں غیر مسلموں کی محبت پیدا کرنے کا باعث بنتے ہیں تو یہ وجوہات ہیں جن کی بنا پر اسے حرام قرار دیا جاتا ہے۔