بنگلہ دیش : پولیس اور مظاہرین میں جھڑپ، 5 افراد ہلاک متعدد زخمی


ڈھاکہ(اے پی اے) بنگلہ دیش میں جنگی جرائم کی ٹربیونل کی طرف سے جماعتِ اسلامی کے رہنما کو سزا سنانے کے فیصلے کے خلاف مظاہروں میں 5 افراد ہلاک،متعدد زخمی ہوگئے ¾ زخمیوں میں ایک کی حالت نازک بتائی جاتی ہے جس کے باعث ہلاکتوں میں اضافہ کاخدشہ ہے ۔ یہ ہلاکتیں گذشتہ روز بنگلہ دیش کے قصبے کاکس بازارمیں پولیس اور مظاہرین کے درمیان جھڑپوں میں ہوئیں۔ ایک سینئر پولیس اہلکار محمد آزاد میاں نے بتایا کہ جماعتِ اسلامی کے5 اہلکار پولیس کے ساتھ مسلح جھڑپ کے دوران ہلاک ہوگئے۔ انہوں نے کہا کہ مظاہرین نے پولیس کے خلاف آتشی اسلحہ اور گھریلو ساختہ بموں کا استعمال کیا۔ پولیس افسر نے بتایا ہم نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے پہلے آنسو گیس اور ربڑ کی گولیوں کا استعمال کیا لیکن وہ ہم پر حملے کرتے رہے اس لیے ہم نے مظاہرین پر فائر کھول دیا لیکن ہمیں یقین نہیں کہ وہ ہماری گولیوں سے ہلاک ہوئے۔ دوسری طرف جماعتِ اسلامی کے ایک مقامی رہنما نے اس بات کی تردید کی کہ ان کے کارکنوں نے پولیس کے خلاف آتشی اسلحے کا استعمال کیا۔ جماعتِ اسلامی نے ان ہلاکتوں کے خلاف پیر کو ملک بھر میں ہڑتال کرنے کا اعلان کیا ہے۔