سنوڈن صرف ایک منٹ میں امریکہ کو تاریخ کا سب سے زیادہ نقصان پہنچا سکتا ہے: برطانوی صحافی

واشنگٹن (اے پی پی) ایڈوروڈ سنوڈن کے پاس امریکہ کے جاسوسی نظام بارے انتہائی حساس معلومات موجود ہیں جو اس نے ابھی تک افشاءنہیں کیں۔ یہ بات ایڈوروڈ سنوڈن کے بارے سب سے پہلے خبریں شائع کرنے والے برطانوی صحافی گلن گرین والڈ نے امریکی خبر رساں ادارے ایسوسی ایٹڈ پریس کو ایک انٹرویو میں کہی۔ معروف برطانوی اخبار گارجین سے وابستہ گلن گرین والڈ نے کہا کہ ایڈورڈ سنوڈن کے پاس امریکہ کی نیشنل سکےورٹی ایجنسی کے کام کے طریقوں بارے ایسی معلومات موجود ہیں جن کی مدد سے نہ صرف اس امریکی ادارے کو دھوکہ دیا جا سکتا ہے بلکہ اس کے متوازی نظام بھی بنایا جا سکتا ہے۔ گلن گرین والڈ کے مطابق ایڈورڈ سنوڈن نے اس موقف کا اظہار کیا ہے کہ وہ یہ حساس معلومات افشاءنہیں کرے گا اور اس حوالہ سے وہ پناہ دینے کے عوض روسی صدر ولادی میر پیوٹن کی شرط بھی تسلیم نہ کرنے کو تیار ہے۔ ایڈورڈ سنوڈن نے کہا کہ این این ایس اے کے طریقہ کار بارے خفیہ دستاویزات کے افشاءسے امریکی حکومت کو شدید مشکلات کا سامنا ہو سکتا ہے اور امریکی شہریوں کی سلامتی کو خطرات لاحق ہو سکتے ہیں۔ ایڈورڈ سنوڈن کے مطابق اس کا مقصد امریکی شہریوں کو اس بات سے آگاہ کرنا تھا کہ امریکی حکومت ان کی خفیہ معلومات کا غیر قانونی استعمال کر رہی ہے۔ گلن گرین والڈ کے مطابق ایڈوروڈ سنوڈن محض ایک منٹ میں امریکہ کو اتنا نقصان پہنچا سکتا ہے جتنا اب تک کی تاریخ میں امریکہ کو نہیں پہنچایا جا سکا۔