پاکستان نےافغان حکومت کی درخواست پرمصالحتی عمل کو کامیاب بنانے کے لیے متعدد طالبان رہنماؤں کو رہا کرنے اور انہیں محفوظ راستہ فراہم کرنے کا فیصلہ کیا ہے.

پاکستان نےافغان حکومت کی درخواست پرمصالحتی عمل کو کامیاب بنانے کے لیے متعدد طالبان رہنماؤں کو رہا کرنے اور انہیں محفوظ راستہ فراہم کرنے کا فیصلہ کیا ہے.

اس بات کا اعلان افغان ہائی پیس کونسل کے چئیرمین صلاح الدین ربانی کے دورہ پاکستان کے دوران پاکستانی قیادت سے ملاقاتوں کے بعد دفتر خارجہ سے جاری ہونے والے مشترکہ اعلامیے میں کیا گیا۔ اعلامیے کے مطابق طالبان رہنماؤں کو افغان حکومت کی درخواست پر رہا کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، مشترکہ اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ پاکستان افغانستان اور امریکہ سمیت تمام متعلقہ ممالک مذاکرات کے لیے طالبان رہنماؤں کو محفوظ راستہ فراہم کریں گے جبکہ پاکستان اور افغانستان امن مذاکرات میں شرکت کے لیے متعدد رہنماؤں کو اقوام متحدہ کی پابندیوں سے استثنی دلانے کے لیےبھی کوششیں کریں گے۔ اعلامیے میں مزید کہا گیا ہے کہ پاکستان اور افغانستان مذہبی رہنماؤں کی سعودی عرب یا کسی دوسرے ملک میں کانفرنس منعقد کریں گے جبکہ طالبان اور دیگر گروپ القاعدہ سمیت دہشتگردوں سے رابطے ختم کر دیں گے۔