ممبئی دھماکے کرزئی کا منموہن سے اظہار یکجہتی دہشت گردی کیخلاف مشترکہ کوششوں پر اتفاق

ممبئی دھماکے کرزئی کا منموہن سے اظہار یکجہتی دہشت گردی کیخلاف مشترکہ کوششوں پر اتفاق

نئی دہلی (اے ایف پی/ نیٹ نیوز/ بی بی سی ڈاٹ کام) افغان صدر حامد کرزئی نے دورہ بھارت کے دوران وزیراعظم منموہن سنگھ سے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں بھارت سے یکجہتی کا اظہار کیا ہے۔ ممبئی حملوں کے بعد وہ گذشتہ روز بھارت پہنچے تھے۔ پانچ ماہ میں ان کا یہ دوسرا دورہ بھارت ہے۔ انہوں نے بھارتی وزیراعظم منموہن سنگھ اور وزیر خارجہ پرناب مکھرجی سے ملاقات میں دہشتگردی کے خلاف جنگ اور خطے کی موجودہ صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔ افغان صدر نے ممبئی حملوں پر منموہن سنگھ سے تعزیت کا اظہار کیا اور کہا کہ دہشتگردی ایسا خطرہ ہے جس کا افغانستان اور بھارت دونوں کو سامنا ہے‘ ہمیں مل کر اس کا خاتمہ کرنا ہو گا۔ میرے دورے کا مقصد افغان حکومت اور عوام کی طرف سے بھارتی عوام سے ممبئی حملوں پر یکجہتی کا اظہار کرنا ہے۔کرزئی سے ملاقات میں بھارتی وزیراعظم نے ان کو ممبئی حملوں کی تحقیقات سے حاصل ہونے والے شواہد بھی دکھائے بعدازاں افغان صدر نے بھارتی وزیر خارجہ پرناب مکھرجی سے ملاقات کی۔ دفتر خارجہ کے بیان کے مطابق دونوں رہنمائوں نے اس بات پر زور دیا کہ تمام ممالک کی ذمہ داری ہے کہ وہ اپنے وعدے پورے کریں۔ اے پی پی کے مطابق دونوں ممالک کے رہنمائوں نے دہشت گردی کے خلاف کوششوں پر اتفاق کیا ہے۔ بھارت اور افغانستان نے دہشت گردی کو انسانیت کیلئے خطرہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ دہشت گردی کے انسداد کیلئے عالمی سطح پر دوطرفہ، کثیرالجہتی اور بین الاقوامی ذمہ داریوں سے عہدہ برا ہونے کی ضرورت ہے۔ ملاقات کے بعد جاری کئے گئے بیان میں کہا گیا ہے کہ ممبئی میں دہشت گردی کے حالیہ واقعات سے ظاہر ہوتا ہے کہ دہشت گردی انسانیت کیلئے خطرہ ہے۔ دونوں رہنمائوں نے بھارت اور افغانستان کے خصوصی تعلقات کو مزید مضبوط کرنے کے عزم کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وہ پورے خطہ کے استحکام اور ترقی کیلئے ملکر کام کریں گے۔ بھارتی وزیراعظم نے افغانستان میں بنیادی ڈھانچہ اور سڑکوں کی حالت کو بہتر بنانے کے وعدہ کا اعادہ کیا۔ بھارتی حکومت نے افغانستان کو دو لاکھ 50 ہزار ٹن گندم امداد کے طور پر دینے کا اعلان کیا۔