بھارت میں 16 سالہ لڑکی کا والد، بھائی اور چچا پر زیادتی کا الزام

نئی دہلی (آن لائن) بھارت میں سولہ سالہ لڑکی نے اپنے والد، بھائی اور چچا پر اسے دو سال تک زیادتی کا نشانہ بنانے کا الزام عائد کیا ہے۔ دو سال تک خاموش رہنے والی نوجوان لڑکی نے اس حوالے سے سب سے پہلے اپنی سکول ٹیچر کو بتایا جس نے اس کی پولیس میں شکایت درج کروانے میں مدد کی۔ مغربی بنگال کے علاقے دھوپگری میں لڑکی نے پولیس کو درج کروائی گئی اپنی شکایت میں کہا ہے کہ اس عرصے کے دوران وہ حاملہ بھی ہوئی تھی۔ رپورٹس کے مطابق پولیس نے شکایت پر تینوں مردوں کو گرفتار کر لیا ہے۔ مقامی پولیس کے ترجمان کے ایل شرپا کا کہنا ہے کہ متاثرہ لڑکی سے 50 سالہ کسان باپ نے متعدد مرتبہ زیادتی کی۔ لڑکی نے الزام عائد کیا ہے کہ اس کے چچا نے بھی اس کا ریپ کیا جب کہ بعد ازاں اس فعل میں اس کا بھائی بھی شامل ہو گیا'۔ لڑکی کا کہنا ہے کہ اس نے اس عرصے کے دوران چار مرتبہ خودکشی کی بھی کوشش کی۔ متاثرہ لڑکی کے مطابق وہ ماضی میں اس بات کے بارے میں بتانے سے کافی خوفزدہ تھی جب کہ اس زیادتی کے بارے میں اس کی ماں کو بھی پتا تھا۔