افغانستان: طالبان کا عدالتی کمپلیکس پر حملہ‘ پولیس چیف‘ 4 اہلکاروں سمیت 10 افراد ہلاک‘ 66 زخمی

افغانستان: طالبان کا عدالتی کمپلیکس پر حملہ‘ پولیس چیف‘ 4 اہلکاروں سمیت 10 افراد ہلاک‘ 66 زخمی

مزار شریف (اے ایف پی+رائٹر) افغانستان کے صوبے بلخ کے شہر مزار شریف میں ملٹری یونیفارم میں ملبوس طالبان نے راکٹوں، مشین گنوں سے عدالتی کمپلیکس پر حملہ کردیا، حملے سے ضلعی پولیس اور بار کے اہلکار، 5شہری ہلاک ہو گئے، سکیورٹی فورسز اور شدت پسندوں کے درمیان 6گھنٹے تک لڑائی جاری رہی، حکام کے مطابق شدت پسند اپیل کورٹ کے مین گیٹ سے اندر داخل ہوئے اور فائرنگ شروع کردی، گرنیڈ بھی پھینکے، 5سکیورٹی اہلکار اور 5شہریوں کی مرنے کی تصدیق کردی گئی، 66افراد زخمی ہوئے جنہیں ہسپتال منتقل کردیا گیا، کئی زخمیوں کی حالت تشویشناک ہے، ہلاکتوں میں اضافے کا اندیشہ ظاہر کیا جا رہا ہے، زخمیوں میں پولیس، پراسیکیوٹر کورٹ سٹاف، خواتین اور بچے شامل ہیں، طالبان ترجمان ذبیح اللہ نے ٹوئٹر پیغام میں حملے کی ذمہ داری قبول کرلی ہے، وزارت داخلہ کے کے مطابق درجنوں افراد کو عدالتی کمپلیکس سے نکال لیا گیا، عدالتی کمپلیکس شہر کے وسط میں واقع ہے جہاں گورنر کے دفاتر اور اہم حکومتی عمارتیں ہیں، کابل سے امریکی سفارتخانے نے حملے کی پرزور مذمت کی ہے۔