برونڈی: جھڑپیں، فائرنگ سے ایک ہلاک‘ مظاہرین نے حکومتی پارٹی کا رکن زندہ جلا دیا

 برونڈی: جھڑپیں، فائرنگ سے ایک ہلاک‘ مظاہرین نے حکومتی پارٹی کا رکن زندہ جلا دیا

بوجمبورا (اے پی پی + اے ایف پی) برونڈی میں پولیس اور مظاہرین کے مابین جھڑپوں میں 2 افراد ہلاک اور 3 زخمی ہو گئے۔ ذرائع ابلاغ کے مطابق نومنتخب صدر پیٹر رے کوروزیزا کے خلاف مظاہروں کے دوران حکمران جماعت کے حامیوں اور مظاہرین میں جھڑپ ہو گئی جس کے دوران پولیس نے مظاہرین پر فائرنگ کر دی جس کے نتیجہ میں سر میں گولی لگنے سے ایک شخص ہلاک ہو گیا۔کیناما نامی ضلع میں کئی دنوں سے کشیدگی جاری ہے جبکہ مسلح مظاہرین اور لاٹھیاں اٹھائے احتجاجی مظاہروں میں شامل ہوئے ہیں۔ واضح رہے کہ برونڈی میں حزب اختلاف اور سول سوسائٹی گروپوں کا کہنا ہے کہ صدر پیٹر رے کوروزیزا کا تیسری مرتبہ اقتدار میں آنا آئین کی خلاف ورزی ہے جس کے تحت صدر صرف دو مرتبہ اپنے عہدے پر فائز رہ سکتا ہے۔ ایک اور واقعہ میں مظاہرین نے حکومتی پارٹی کے ایک کارکن کے گلے میں ٹائر ڈال کر آگ لگا کر زندہ جلا دیا۔