بھارت لداخ بارڈر پر فوجیوں کی تعداد نہ بڑھائے : چین کا انتباہ

بھارت لداخ بارڈر پر فوجیوں کی تعداد نہ بڑھائے : چین کا انتباہ

بیجنگ (نوائے وقت رپورٹ) بھارت اور چین کے درمیان لداخ بارڈر کے معاملے پر ایک بار پھر کشیدگی سامنے آئی ہے، چین نے بھارت کو تنبیہہ کی ہے کہ وہ لداخ بارڈر پر فوجیوں کی تعداد نہ بڑھائے۔ چینی جنرل نے کہا ہے کہ بھارت پٹرولنگ میں اضافہ کرکے ہمارے لئے مسائل پیدا نہ کرے۔اے ایف پی کے مطابق پیپلز لبریشن آرمی اکیڈمی کے ریسرچ ڈیپارٹمنٹ کے ڈپٹی ڈائریکٹر میجر جنرل لیویوآن نے کہا بھارت دنیا میں واحد ملک ہے جو چین کو خطرہ سمجھتے ہوئے اپنی فوجی طاقت بڑھا رہا ہے لیکن بھارت جو کہتا اور کرتا ہے اس لحاظ سے بہت محتاط ہے۔ مئی میں وزیراعظم لی کیانگ کے دورہ بھارت کے بعد سے سرحد پر صورتحال قابو میں ہے۔ ان کا بیان ایسے وقت سامنے آیا ہے جب 7 برس بعد بھارتی وزیر دفاع اے کے انتھونی فوجی کمانڈروں کے وفد کے ہمراہ چین کے 3 روزہ دورے پر چلے گئے ہیں۔ یوآن نے مزید کہا جنوبی سمندر کے حوالے سے فلپائن کا کردار گڑبڑ کرنے سے زیادہ کچھ نہیں۔ امریکہ نے اس کا ساتھ دے کر تعصب کا مظاہرہ کیا اور جلتی پر تیل پھینکا ہے۔