جنوبی سوڈان میں جنگ بندی کے غرض سے امن مزاکرات تعطل کا شکار

عدیس ابابا   (اے پی پی) جنوبی سوڈان کے  شورش زدہ علاقوں میں متحارب فریقوں کے مابین جنگ بندی کے غرض سے  ہونے والے امن مزاکرات تعطل کا شکار ہو گئے۔دونون فریقوں کے مابین بات چیت  کا آعاز جمعہ کو ایتھوپیا کے دارالحکومت میں ہو گیا تھا تا ہم جنوبی سوڈان کی حکومت اور باغیوں کے درمیان ایجنڈے کے معاملے پر اختلافات کے باعث  مزاکرات غیر معینہ مدت کے لے ملتی کر دیے گئے۔  مزاکرات میںجنوبی سوڈان کے وزیر اطلاعات مائیکل ما کوئی حکومتی وفداور  یو ہانس موسی باغیوں کے وفد کی قیادت کر رہے تھے۔ابتدائی بات چیت میں یہ طے پا گیا کہ جب تک ایک ایجنڈا  طے نہیں کیا جاتا ، مزاکرات شروع نہین کیے جائیں گے۔جنوبی سوڈان کے وزیر اطلاعات مائیکل ما کوئی نے اس بات کی تصدیق کر دی کہ انہون نے با غی رہنما یو ہانس سے جمعہ کو ملاقات کی تھی۔با غیوں کے رہنما یوہانس نے کہا کہ دونون فریقو ں کا ایجینڈے پر متفق ہونا ضروری ہے۔   ایتھوپیا کے وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ مزاکرات کا ابتدائی دور تعمیری رہا۔