مصرمیں پارلیمانی انتخابات کے دوسرے مرحلے کی ووٹنگ جاری ہے، دو اپوزیشن جماعتوں نے انتخابات کا بائیکاٹ کردیا۔

مصرمیں پارلیمانی انتخابات کے دوسرے مرحلے کی ووٹنگ جاری ہے، دو اپوزیشن جماعتوں نے انتخابات کا بائیکاٹ کردیا۔

مبصرین کےمطابق مسلم برادرہڈ اوروفد پارٹی کے بائیکاٹ کے بعد صدرحسنی مبارک کی جماعت نیشنل ڈیموکریٹک پارٹی ایک بار پھر الیکشن میں بھاری اکثریت سے کامیابی حاصل کرلے گی۔ این ڈی پی آج تک ایک بھی انتخاب نہیں ہاری۔ پارلیمنٹ میں اٹھائیس ارکان کی نمائندگی رکھنے والی برادرہڈ پارٹی نومبر میں ہونے والے پہلے انتخابی مرحلے میں ایک بھی سیٹ حاصل نہیں کرسکی تھی۔ حکام کے مطابق پولنگ کے عمل میں شفافیت کو یقینی بنایا گیا ہے اور کہہں بھی کسی دھاندلی کے شواہد سامنے نہیں آئے۔ تجزیہ نگاروں کے مطابق حکومت آئندہ سال ہونے والے صدارتی الیکشن میں فتح کو یقینی بنانا چاہتی ہے، اگرچہ بیاسی سالہ حسنی مبارک کی جانب سے دوبارہ صدر بننے کی خواہش کا اظہار سامنے نہیں آیا۔ امکان ہے کہ وہ اپنے چھیالیس سالہ بیٹے اور این ڈی پی کے سربراہ کو یہ ذمہ داری سونپیں گے۔