مقبوضہ کشمیر: بھارتی مظالم کیخلاف ’’جیل بھرو‘‘ مہم جاری: کالا قانون افسپا منسوخ کیا جائے: ایمنسٹی انٹرنیشنل

سرینگر (اے پی پی) مقبوضہ کشمیر میں قابض انتظامیہ کی طرف سے آزادی پسند رہنمائوں کی پے در پے نظربندی اور دیگر پابندیوں کے خلاف جموںو کشمیر لبریشن فرنٹ کی دس روزہ جیل بھرو مہم بھر پور طریقے سے جاری ہے۔ کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق بدھ کو مہم کے چھٹے روز جموںو کشمیر لبریشن فرنٹ کے رہنما شیخ خالد مبارک اور دیگرنے رضاکارانہ گرفتاری دی۔ ایمنسٹی انٹرنیشنل نے وادی سے کالا قانون افسپا ہٹانے کا مطالبہ کیا ہے۔ مقبوضہ کشمیر میںبزرگ حریت رہنماء سید علی گیلانی نے ٹنگڈار میں بھارتی فوجیوں کے ہاتھوں ایک کشمیری شہری محمد اکبر شیخ کے قتل کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے ریاستی دہشت گردی کی بدترین کارروائی قراردیا ہے۔ جموں و کشمیر سالویشن موومنٹ کے چیئرمین ظفر اکبر بٹ نے 2010ء کی عوامی تحریک کے دوران جون میں شہید ہونے والے کشمیریوں کو زبردست خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ بے گناہ کشمیریوں کے قاتل بھارتی فوجیوں کے خلاف ابھی تک کوئی کارروائی نہیں کی گئی ہے۔ جموں کشمیر نیشنل فرنٹ کے چیئرمین نعیم احمد خان نے جموں خطہ میں جنگل کی اراضی سے قبضہ چھڑانے کی آڑ میں مسلمانوں کو زبردستی ان کے گھروں سے بے دخل کرنے پر شدید تشویش ظاہر کی ہے۔ مسلم لیگ جموں و کشمیر نے پارٹی ترجمان محمد رفیق گنائی کے گھر پر بھارتی پولیس کے مسلسل چھاپوں پر سخت تشویش کا اظہار کیا ہے۔ سرینگر میں منعقدہ ایک سیمینار کے مقررین نے ایران اور پاکستان پر زور دیا ہے کہ وہ مقبوضہ علاقے میں آبادی کا تناسب تبدیل کرنے کی غرض سے ہندوتوا کی پالیسیوں کے خلاف عالم اسلام کو متحرک کرنے کیلئے سفارتی سطح پر مشترکہ حکمت عملی وضع کریں۔ اسلام آباد میں بھارت کے خلاف اور سید صلاح الدین کے حق میں ریلی نکالی گئی۔ پولیس کی طرف سے موبائل ٹاوروں کو سی آر پی ایف کے کیمپوں اور پولیس سٹیشنوں میں منتقل کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ ادھر سرینگر ( آن لائن )مقبوضہ کشمیر میں کل جماعتی حریت کانفرنس نے کشمیر کے حوالے سے بھارت کی ہٹ دھرمانہ پالیسی کو یکسر مسترد کرتے ہوئے تحریک آزاد ی کو منطقی انجام تک جاری رکھنے کے کشمیریوں کے عز م کا اعادہ کیا ہے۔ کل جماعتی حریت کانفرنس کے ترجما ن نے سرینگر میں ایک بیان میں بھارتی وزیر داخلہ اور امور خارجہ کے وزراء کے حالیہ بیانات کو تاریخی اور زمینی حقائق کے منافی قرار دیا ۔ انہوں نے کہا کہ بھارتی رہنما اس طرح کے بیانات کے ذریعے عالمی برادری کو گمراہ کرنے کی کوشش کرتے ہیں۔ ترجمان نے کہا کہ جموںوکشمیر عالمی سطح پر تسلیم شدہ متنازعہ خطہ ہے جو اقوام متحدہ کے ایجنڈے پر موجود ہے لہذا بھارت اپنے منفی بنایات کے ذریعے اس حقیقت کو جھٹلا نہیں سکتا۔ انہوںنے کہا کہ کشمیری بھارتی دعوئوں کو ہمیشہ مسترد کرتے رہے ہیں اور وہ اس طرح کے طرز عمل سے ہرگز مرعوب نہیں ہونگے ۔ ترجمان نے کہا کہ بھارت کے جبر واستبداد اور اوچھے ہتھکنڈوں کے باجود کشمیریوں کے حوصلے بلند ہیں اور وہ اپنی جدو جد مقصد کے حصول تک ہر قیمت پر جاری رکھیں گے ۔