مقبوضہ بیت المقدس: بے دخل کئے گئے عرب بدوئوں نے یوم غضب منایا، مظاہرے

مقبوضہ بیت المقدس (آن لائن)اسرائیل میں رہائش پذیر عرب بدؤوں نے انھیں دوسری جگہ بسانے کے حکومتی منصوبے کے خلاف صحرائے نقب کے علاقوں میں احتجاجی مظاہرے کئے  جس  کے دورا ن جھڑ پو ں میں  15 اہلکار زخمی  ہو گئے جبکہ پو لیس نے  28 مظا ہر ین کو بھی حرا ست میں لے لیا۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطا بق اسرائیلی حکومت کے اس منصوبے کے خلاف’یوم غضب‘منایا گیا اور صحرائے نقب کے شہروں اور قصبوں میں احتجاجی مظاہرے ہوئے جبکہ غرب اردن اور مقبوضہ بیت المقدس میں ہونے والے مظاہروں میں ہزاروں افراد نے شرکت کی۔عرب بدؤوں کا کہنا ہے کہ اسرائیل کا منصوبہ انھیں اپنی آبائی زمین سے بے دخل کرنا ہے جبکہ اسرائیلی حکومت کے مطابق اس منصوبے کا مقصد زمین کے دیرینہ تنازع کو حل کرنا اور لوگوں کو بہتر سہولیات فراہم کرنا ہے۔ صحرائے نقب کے مختلف علاقوں میں پولیس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے آنسو گیس اور پانی کی توپوں کا استعمال کیا جبکہ مظاہرین نے پولیس پر پتھراؤ کیا جس میں اطلاعات کے مطابق 15 اہلکار زخمی ہو گئے جبکہ مقامی ذرائع ابلاغ کے مطابق پولیس نے 28 افراد کو گرفتار بھی کیا ہے۔