ڈی پی او کی طرف سے کیسز ریفر کیا جانا پی ایل سی کی کامیابی ہے: امجد فاروق

خبریں ماخذ  |  ویب ڈیسک
ڈی پی او کی طرف سے کیسز ریفر کیا جانا پی ایل سی کی کامیابی ہے: امجد فاروق

گجرات :ڈی پی او کی طرف سے کیسز ریفر کیے جانا سی پی ایل سی کی بہت بڑی کامیابی ہے، سی پی ایل سی کیس پر مکمل انکوائری کر کے فیصلہ کرتی ہے اور محکمہ پویس فیصلے پر عمل درآمد کرواتا ہے ، سی پی ایل سی کے پاس تقریباً 650 کیسز آئے جنہیں احسن انداز سے حل کروایا ہے ، ان خیالات کا اظہار سی پی ایل سی کے چیئرمین الحاج امجد فاروق نے گجرات پریس کلب میں کیا ، انہوں نے کہا کہ بھائیوں کے درمیان 45 سالہ جائیداد کی تقسیم کا کیس بھی سی پی ایل سی نے حل کرویا  .گجرات کے 22 تھانوں کے علاقوں میں 3 افراد پر مشتمل کنوینئر بنا دیے گئے ہیں، تمام افراد جذبہ خدمت خلق سے سرشار ہیں اور دکھی انسانیت کی خدمت کیلئے اہم خصوصی کردار ادا کر رہے ہیں ، سی پی ایل سی تمام معاملات احسن انداز سے چلا رہی ہے خود بھی روزانہ کی بنیاد پر آفس میں بیٹھتا ہوں تاکہ عوامی مسائل کے حل میں آسانیاں پیدا ہوں۔، سی پی ایل سی کے عملی اقدامات سے عوامی مسائل میں خاطر خواہ کمی آئی ہے ، الحاج امجد فاروق نے مزید کہا کہ سی پی ایل سی کے پلیٹ فارم سے گجرات پولیس ملازمین اور ان کے گھر والوں کیلئے ہسپتال بنانے کا منصوبہ شروع کیا گیا تھا جو چند وجوہات کی بنا پر التواءمیں چلا گیا ہے. ہسپتال کی تکمیل پولیس ملازمین اور شہید پولیس ملازمین کے لواحقین کیلئے کسی نعمت سے کم نہیں تھی ، جب ہسپتال کی تعمیر کیلئے فنڈنگ کیلئے کہا گیا تو فنڈز کی بارش ہو گئی اور سی پی ایل سی کے پاس پونے 3 کروڑ روپے جمع ہو گئے اور ابھی پونے 2 کروڑ کی رقم کیلئے لوگوں کی طرف سے اعلان کیے گئے ہیں ، ہسپتال کی تعمیر پر 80/85 لاکھ خرچ کیے جا چکے ہیں اور باقی سی پی ایل سی کے پاس محفوظ ہیں۔