پاکستان‘ ویسٹ انڈیز کا تیسرا‘ پانچواں ون ڈے مشکوک ہے : برطانوی میڈیا کا دعوی

لندن+لاہور(این این آئی+ سپورٹس رپورٹر +نوائے وقت رپورٹ) برطانوی اخبار نے دعویٰ کیا ہے کہ پاکستان اور ویسٹ انڈیز کے درمیان موجودہ ون ڈے کرکٹ سیریز کا تیسرا اور پانچواں میچ مشکوک ہے اور آئی سی سی اینٹی کرپشن یونٹ اس کی تحقیقات کرے گا۔ اخبار دی میل کی رپورٹ کے مطابق تیسرے اور پانچویں ون ڈے میں سلو رن ریٹ تحقیقات کا مرکزی نقطہ ہوگا۔ برطانوی اخبار دی میل کے مطابق تیسرے ون ڈے میں آخری اوور میں پاکستان کی جانب سے رن آﺅٹ کا چانس ضائع کرنے کے معاملے پر بھی تحقیقات کی جائیں گی جبکہ پانچویں ون ڈے میں ویسٹ انڈین بیٹسمینوں کے سست آغاز کی بھی تحقیقات ہوں گی اس سلسلے میں آئی سی سی کا اینٹی کرپشن یونٹ ٹائی میچ کے آخری اوور کرنے والے وہاب رہاض سے پوچھ گچھ کر سکتا ہے رپورٹ کے مطابق تیسرے ون ڈے کی آخری بال پر مصباح الحق کی فیلڈ سیٹنگ اور رن آﺅٹ کا موقع ضائع کرنا بھی مشکوک ہے۔ ویسٹ انڈیز کے کھلاڑی مارلن سیموئلز کی سست بیٹنگ بھی مشکوک ہے۔ پاکستان کرکٹ بورڈ کے قائم مقام چیئرمین نجم سیٹھی نے کہا ہے کہ میچ فکسنگ الزامات کے حوالے سے ابھی تک کوئی مصدقہ معلومات حاصل نہیں ہوئیں۔ برطانوی اخبار میں میچ فکسنگ کی خبر چلی ہے۔ ہم تصدیق کررہے ہیں۔ اخبار میں شائع ہونے والی خبر کے بعد آئی سی سی نے پی سی بی سے کوئی رابطہ نہیں کیا حالانکہ انہیں پاکستان پر لگنے والے الزامات کے بعد رابطہ کرنا چاہئے تھا۔ اس حوالے سے ہم اپنے مشیر سے مشاورت کررہے ہیں۔ خبر غلط ہونے پر برطانوی اخبار کیخلاف قانونی کارروائی کریں گے۔ برطانوی اخبار میں خبر چلنے کے بعد آئی سی سی سے رابطہ کرلیا ہے۔ ادھر آئی سی سی نے اس حوالے سے تبصرے سے انکار کر دیا، ترجمان آئی سی سی کا کہنا ہے کہ آئی سی سی اینٹی کرپشن اینڈ سکیورٹی یونٹ کے معاملات پر تبصرہ نہیں کرتی۔