سارک سیٹلائٹ پروگرام، پاکستان بھارت سے تعاون پر رضامند ہو گیا سیارہ اگلے برس چھوڑا جائیگا : بھارتی میڈیا

نئی دہلی (نوائے وقت رپورٹ/اے این این) سارک سیٹلائٹ پروگرام کے تحت پاکستان بھارت سے تعاون پر رضامند ہو گیا۔ بھارتی میڈیا کے مطابق معاہدے کے تحت 2016ء میں سارک سیٹلائٹ خلا میں چھوڑا جائے گا۔ سارک سیٹلائٹ منصوبے کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کیلئے سارک ممالک کے ارکان کا اجلاس ختم، اعلامیہ جاری کردیا گیا۔ پاکستان سے 8رکنی وفد نے اجلاس میں شرکت کی، سارک مواصلاتی سیارہ اگلے سال دسمبر میں خلا میں بھیجا جائے گا۔ ایک بھارتی اخبار کی رپورٹ کے مطابق بھارتی وزارت خارجہ کے اعلیٰ حکام اور بھارتی خلائی تحقیقاتی ادارہ کے اعلیٰ حکا م نے سارک ممالک کے نمائندوں بشمول پاکستان سے مذاکرات کرلئے۔ بھارتی وزارت خارجہ کے جوائنٹ سیکرٹری اجے گوندانے نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ تمام رکن ممالک بشمول پاکستانی وفد کے 8ارکان نے مشاورت میں حصہ لیا۔ مالدیپ کے ایک وزیر نے کانفرنس میں شرکت کی۔ اگلے سال چارٹر ڈے کے موقع پر مواصلاتی سیارہ خلا میں بھیجا جائیگا۔ بھارتی خلائی تحقیقاتی ادارے کے ترجمان نے کہاکہ اجلاس مکمل طورپر نتیجہ خیز رہا۔ مواصلاتی سیارے کے حوالے سے نقشہ تقریباً تیارکرلیا گیا۔