افغانوں کی رجسٹریشن کے لئے مشترکہ کمیٹی قائم،31 دسمبر کے بعد پناہ گزینوں کو رعایت نہیں دیں گے: پاکستان

پشاور (آن لائن) پاکستان اور افغانستان نے غیر رجسٹر افغانوں کی رجسٹریشن کے لئے مشترکہ کمیٹی قائم کر دی ہے جس کے ذریعے میکانزم وضع کیا جائے گا تاہم اسلام آباد نے کابل پر واضح کیا ہے وہ 31 دسمبر کی ڈیڈ لائن کے بعد افغان پناہ گزینوں کو رعایت نہیں دے سکتا ۔ ایک رپورٹ کے مطابق ایک سینئر حکومتی عہدیدار نے بتایا کہ دونوں طرف کے حکام کے اجلاس میں پناہ گزینوں کی وطن واپسی کے حوالے سے جامع پیکیج کے حوالے سے بات چیت ہوئی۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے افغان وفد کو کہا ہے کہ انسانی مدد کے آنے تک وہ یہاں قیام پذیر تھے اور اب پناہ گزینوں کو مزید توسیع نہیں دی جا سکتی ۔ افغان حکام رجسٹرڈ اور غیر رجسٹرڈ دونوں کے لئے توسیع چاہتے ہیں تاہم ہم نے انہیں بتایا کہ غیر رجسٹر شدہ افغانوں کے ساتھ قانون کے مطابق نمٹا جائے گا۔ عہدیداران نے بتایا کہ یہ کمیٹی نادرا کے حکام ‘ افغان پناہ گزینوں کے کمشنریٹ اور افغان وزارت برائے پناہ گزینوں کے عہدیداروں پر مشتمل ہو گی ۔ اس بات کا بھی فیصلہ کیا گیا کہ افغان حکومت پناہ گزینوں کی باعزت وطن واپسی میں تعاون اور ممکنہ وسائل فراہم کرے گی ۔ اقوام متحدہ کا ادارہ برائے پناہ گزین بھی افغان حکومت کی واپسی حوالے سے مدد کرے گا۔